کیا اس وجہ سے بھی انسان کا رنگ کالا ہوسکتا ہے؟ سفید فام شخص کا رنگ کالا ہونے لگا، وجہ ایسی کہ ڈاکٹرز بھی چکرا گئے

کیا اس وجہ سے بھی انسان کا رنگ کالا ہوسکتا ہے؟ سفید فام شخص کا رنگ کالا ہونے ...
کیا اس وجہ سے بھی انسان کا رنگ کالا ہوسکتا ہے؟ سفید فام شخص کا رنگ کالا ہونے لگا، وجہ ایسی کہ ڈاکٹرز بھی چکرا گئے

  

ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک) ہیپاٹائٹس سی آخری سٹیج پر پہنچ جائے تو اس کا واحد حل لیور ٹرانسپلانٹ ہوتا ہے، دنیا میں اب تک ہزاروں لوگ لیور ٹرانسپلانٹ کروا چکے ہیں لیکن اس روسی کاروباری شخص سیمن جینڈلر میں لیورٹرانسپلانٹ کے بعد حیرت انگیز تبدیلی رونما ہو گئی۔ روس کے سفید فام شخص کو ہیپاٹائٹس سی اور کینسر جیسے موذی امراض لاحق ہو گئے۔ ڈاکٹروں نے اسے بتایا کہ اب اس کے زندہ رہنے کی ایک ہی صورت ہے کہ وہ جگر کی پیوندکاری کروا لے۔ سیمن جینڈلر نے روس میں اپنے تمام دوستوں سے اس سلسلے میں مدد کے لیے رابطہ کیا لیکن چونکہ روس میں لیور بڑی مشکل سے دستیاب ہوتا ہے اس لیے ہر طرف سے نفی میں جواب آیا۔ سیمن کا کاروبار امریکہ تک پھیلا ہوا تھا، اس نے نیویارک میں اپنے دوستوں سے صورتحال کا ذکر کیا جنہوں نے اس کے لیے 5لاکھ ڈالر(تقریباً 5ارب روپے ) کے عوض جگر کا انتظام کر دیا، لیکن وہ جگر کسی سیاہ فام امریکی کا تھا۔

مزید پڑھیں:انڈر ویئر کے مردوں کی صحت پر اثرات ،سائنسدانوں نے مشورہ دے دیا 

نیویارک میں ڈاکٹروں نے کامیاب آپریشن کرتے ہوئے سیمن میں اس سیاہ فام کا جگر لگا دیا۔ کچھ ہی عرصہ بعد سیمن کے ایک دوست نے مشاہدہ کیا کہ سیمن کی رنگت سیاہ ہوتی جا رہی ہے۔ پہلے تو سیمن نے سمجھا کہ اس کا دوست مذاق کر رہا ہے لیکن بعد میں اس نے خود بھی محسوس کیا کہ اس کی رنگت واقعی کالی ہوتی جا رہی تھی۔ سیمن اب تقریباً سیاہ فام ہو چکا ہے۔ سیمن کا کہنا ہے کہ ’’اس چیز سے فرق نہیں پڑتا کہ میں گورا ہوں یا کالا، میں یہ جان کر خوش ہوں کہ میرا نیا جگر ٹھیک کام کر رہا ہے اور میں ایک صحت مند زندگی گزار رہا ہوں۔‘‘

مزید :

تعلیم و صحت -