سرکاری ملازمین کا پھر احتجاجی تحریک کا اعلان عید پنجاب اسمبلی کے سامنے منائیں گے

سرکاری ملازمین کا پھر احتجاجی تحریک کا اعلان عید پنجاب اسمبلی کے سامنے ...

  

 لاہور(خبر نگار) صوبے بھر کے سرکاری ملازمین نے ایک مرتبہ پھر احتجاجی تحریک کا اعلان کر دیا ہے اور عید الفطر پنجاب اسمبلی کے سامنے منانے کا اعلان کر دیا ہے جبکہ عید کے بعد ایوان وزیر اعلیٰ کے گھیراؤ کی دھمکی دے دی ہے ۔اس حوالے سے ایپکا کے صوبائی صدر حاجی محمد ارشاد نے صوبائی اور ریجنل عہدیداروں لالہ محمد اسلم ،یونس بھٹی اور فضل داد گجر کے ہمراہ صحافیوں کو بتایا کہ حکومت نے چارٹر آف ڈیمانڈ کی منظوری کیلئے 15جولائی تک مہلت حاصل کی تھی۔اور اس میں حکومت کو بار بار یاددہانی بھی کروا ئی گئی۔وزیرقانون رانا ثناء اللہ نے بھی چارٹر آف ڈیمانڈ کی منظور ی کیلئے یقین دہانی کروائی تھی لیکن اس کے باوجود حکومت ٹس سے مس نہ ہوئی ہے جس پر ایپکا کے صوبائی اور مرکزی عہدیداروں کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ سرکاری ملازمین عید الفطر گھروں میں نہیں پنجاب اسمبلی کے سامنے منائیں گے جس میں سرکاری ملازمین کے بچے بھی شرکت کریں گے،اس موقع پر پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی کیمپ لگایا جائے گا۔اور سرکاری ملازمین پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کریں گے۔حاجی محمد ارشاد نے مزید بتایا کہ پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی مظاہرہ میں لاہور سمیت شیخوپورہ،ننکانہ صاحب اور قصور کے اضلاع سے تعلق رکھنے والے ملازمین شرکت کریں گے۔جبکہ فیصل آباد ،گوجرانوالہ ،گجرات ،راولپنڈی ،ساہیوال اور ملتان سمیت دیگر اضلاع سے تعلق رکھنے والے ملازمین متعلقہ ڈی سی اوز کے دفاتر کے سامنے عید منائیں گے،جہاں پر ملازمین احتجاج بھی کریں گے۔عید کے بعد احتجاج کا دائرہ کار وسیع کر دیا جائے گا۔جس میں پہلے مرحلے میں ایوان وزیر اعلیٰ کا گھیراؤ کیا جائے گا۔اور دوسرے مرحلہ میں لاہور سمیت پنجاب بھر کے سرکاری دفاتر کا مکمل بائیکاٹ کرنے کی کال دی جائے گی جس میں افسران کو بھی دفاتر میں گھسنے نہیں دیا جائیگا۔

سرکاری ملازمین

مزید :

صفحہ آخر -