افغان صوبے ننگر ہار میں پھر امریکی ڈرون حملہ، کمانڈروں سمیت 28 طالبان ہلاک

افغان صوبے ننگر ہار میں پھر امریکی ڈرون حملہ، کمانڈروں سمیت 28 طالبان ہلاک
افغان صوبے ننگر ہار میں پھر امریکی ڈرون حملہ، کمانڈروں سمیت 28 طالبان ہلاک

  

کابل (آئی این پی+اے پی پی) افغانستان کے صو بے ننگر ہار میں امریکی ڈر ون حملے کے نتیجے میں 28افغان طالبان ہلاک ہوگئے۔ بدھ کو غیر ملکی میڈیا کے مطابق افغان صوبہ ننگر ہار میں طالبان کا ایک اجلاس ہورہا تھا اس دوران امریکی جاسوس طیارے کی طرف سے میزائل داغا گیا جس کے نتیجے میں اہم کمانڈروں سمیت اٹھائیس طالبان ہلاک ہوگئے جبکہ بیسیوں زخمی ہوئے۔ واضح رہے کہ اس سے پہلے بھی امریکہ اس صوبے میں متعدد ڈرون حملے کرچکا ہے۔ افغانستان میں سکیورٹی فورسز نے مختلف کارروائیوں کے دوران22 طالبان کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ فاریاب میں پرائیوٹ بنک کے قریب دھماکے میں 19افرادزخمی ہوگئے، متعدد کی حالت تشویشناک ہے۔ افغان وزارت داخلہ کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ہرات، نیمروز، میدان وردک، پکتیا، تخار، قندوز، سرائے پل، بلخ، قندھار، زابل اورارزگان میں افغان نیشنل آرمی اور پولیس نے خصوصی کارروائیاں کیں۔ ادھر اقوام متحدہ نے صوبہ بغلان کی ایک مسجد میں بم دھماکے شدید مذمت کی ہے۔ اس واقعے میں 40 کے قریب شہری زخمی ہوگئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -