کیا یہ جوڑا واقعی خوش ہے یا صرف کیمرے کیلئے مسکرایا جارہا ہے؟ اب آپ تصویر دیکھ کر پتہ لگاسکتے ہیں، طریقہ جانئے

کیا یہ جوڑا واقعی خوش ہے یا صرف کیمرے کیلئے مسکرایا جارہا ہے؟ اب آپ تصویر ...
کیا یہ جوڑا واقعی خوش ہے یا صرف کیمرے کیلئے مسکرایا جارہا ہے؟ اب آپ تصویر دیکھ کر پتہ لگاسکتے ہیں، طریقہ جانئے

  

برمنگھم (نیوز ڈیسک) کسی بھی جوڑے کے درمیان تعلقات ہمیشہ خوشگوار نہیں رہ سکتے، ان میں اتار چڑھاؤ آتا رہتا ہے۔ بعض اوقات شریک حیات مطمئن نہ ہو تو یہ واضح نظر آتا ہے لیکن اکثر یہ بات واضح نہیں ہوتی اور اس صورت میں آپ کو حقیقت جاننے کیلئے جوڑے کی باڈی لینگوئج ہی مدد دے سکتی ہے۔ ماہر نفسیات ٹریسی کوکس کہتی ہیں کہ باڈی لینگوئج کے مطالعے کیلئے اور وقت گزرنے کے ساتھ تعلق میں آنے والی تبدیلیوں کو جاننے کیلئے دونوں کی اکٹھی بنائی گئی تصویروں سے بہتر کوئی چیز نہیں۔ اس تکنیک کو استعمال کرنے کیلئے گزشتہ کچھ عرصہ میں بنائی گئی تصاویر کو غور سے دیکھیں۔ کسی بھی تصویر پر غور کرتے ہوئے مندرجہ ذیل باتوں پر دھیان دیں۔

مزید پڑھیں:دنیا کے خوبصورت ترین مرد اور عورت کیسے دکھنے چاہیئں؟کمپیوٹر نے تصویر بنا کر دے دی

*۔۔۔ تصویر میں دونوں ایک دوسرے کے کتنے قریب ہیں؟ اگردونوں کے بالائی دھڑ بہت قریب ہیں تو یہ ظاہر کرتا ہے کہ دونوں ایک دوسرے کیساتھ خوش ہیں، اگر فاصلے پر ہیں تو یہ ناخوشی کی علامت ہے۔

*۔۔۔ چہرے کے تاثرات کو دیکھیں، کیا چہرہ خوشی کو ظاہر کرتا ہے یا کھویا کھویا نظر آتا ہے۔

*۔۔۔ کندھوں کی پوزیشن کو بھی غور سے دیکھیں۔ اگر کندھے پیچھے کی طرف ہٹے ہوئے اور آرام دہ حالت میں ہیں تو وہ شخص خوش ہے، اگر کندھے آگے کی طرف جھکے ہیں تو وہ خوش نہیں، اگر کندھے اوپر کی طرف اُچکی ہوئی حالت میں ہیں تو وہ ذہنی دباؤ کا شکار ہے۔

*۔۔۔ مسکراہٹ بہت بڑی علامت ہے، اگر جوڑا مسکراتا نظر آتا ہے، لیکن مسکراہٹ ایسی ہے کہ جس کے ساتھ آنکھیں اور پورا چہرہ بھی کھلا نظر�آتا ہے تو یہ حقیقی خوشی اور قربت ہے، لیکن اگر تصویر میں چہرے سے مسکراہٹ تقریباً غائب ہے یا باقی چہرہ اس کا ساتھ نہیں دیتا تو سمجھ جائیے کہ دل مطمئن نہیں۔

ٹریسی کوکس کہتی ہیں کہ آپ کو صحیح صورت حال جاننے کیلئے متعدد تصاویر کا بغور جائزہ لینا چاہیے تاکہ غلط فہمی کی گنجائش نہ رہے۔

آپ تصاویر کو ان کی تاریخ کے حساب سے ترتیب میں رکھ کر یہ بھی دیکھ سکتے ہیں کہ ایک سال پہلے جوڑے کے تعلق کی کیفیت کیا تھی، چھ ماہ پہلے کیا صورتحال تھی اور چند دن پہلے بنائی گئی تصویر کیا کہتی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -