احتساب عدالت، حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع

احتساب عدالت، حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے ایڈمن جج جواد الحسن نے آمدنی سے زائد اثاثہ جات اور منی لانڈرنگ کیس میں ملوث حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع کردی،عدالت نے ملزم کو دوبارہ 28 جولائی کو عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیاہے،عدالت نے نیب کوبھی آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس کا ریفرنس جلد دائر کرنے کی ہدایت کی ہے،گزشتہ روز حمزہ شہباز کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ کے بعد احتساب عدالت کے روبرو پیش کیا گیا،دوران سماعت فاضل جج نے نیب کے پراسیکیوٹر عاصم ممتاز اورتفتیشی افسر حامد جاوید سے منی لانڈرنگ کیس کے ریفرنس سے متعلق استفسارکیا کہ پراسیکیوٹر صاحب ریفرنس کب آئے گا؟ نیب کے پراسیکیوٹر نے کہا کہ منی لانڈرنگ کیس کا ریکارڈ اکٹھا کررہے ہیں، ضروری تحقیقات درکار ہیں جس کے بعد ریفرنس دائر کردیا جائے گا، شہباز شریف سے تحقیقات درکار ہیں وہ تعاون نہیں کررہے، تفتیشی افسر نے کہا کہ میاں شہباز شریف کی درخواست ضمانت ہائیکورٹ میں چل رہی ہے، حمزہ شہباز کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ نیب حکام کو ایک سال ہوچکا ہے حمزہ شہباز کے خلاف ریفرنس دائر نہیں کیا جاسکاہے،حمزہ شہباز کو جان بوجھ کر جیل میں قید رکھا گیا ہے، فاضل جج نے کہا کہ یہ باتیں ادھر کرنے والی نہیں ہیں، حمزہ شہباز کے وکلاء نے عدالت سے استدعا کہ عدالتی چھٹیوں کے بعد تک کیس کی سماعت ملتوی کی جائے،عدالت نے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد کیس کی مزید سماعت 28جولائی پر ملتوی کردی۔

احتساب عدالت

مزید :

صفحہ آخر -