امریکی صحافی ڈینیل پرل قتل کیس کے ملزمان کی نظر بندی میں 3 ماہ کی توسیع

  امریکی صحافی ڈینیل پرل قتل کیس کے ملزمان کی نظر بندی میں 3 ماہ کی توسیع

  

کراچی(آئی این پی) محکمہ داخلہ سندھ نے امریکی صحافی ڈینیل پرل قتل کیس کے ملزمان کی نظر بندی میں 3 ماہ کی توسیع کر دی۔ ملزمان کی نظر بندی میں 3 ماہ کی توسیع کے حوالے سے محکمہ داخلہ سندھ نے نوٹیفیکشن بھی جاری کر دیا ہے۔ نوٹیفکیشن کے مطابق ملزمان کو انسداد دہشت ایکٹ کی دفعہ 11 ٹرپل ای کے تحت نظر بند رکھا گیا ہے۔ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ملزمان کو رہا کر دیا گیا تو وہ پھر سے دہشتگردی کا نیٹ ورک بنا سکتے ہیں۔ ملزمان میں احمد عمر سعید، فہد نسیم، سلمان ثاقب اور شیخ محمد شامل ہیں۔ یاد رہے کہ سندھ ہائی کورٹ نے ڈینیل پرل قتل کیس میں چاروں ملزموں کی سزاوں کو کالعدم قرار دیا تھا۔ صوبائی حکومت کی جانب سے سندھ ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی گئی تھی جس میں عدالت عالیہ کا فیصلہ کالعدم قرار دینے کی استدعا کی گئی تھی۔ درخواست میں سپریم کورٹ سے اپیل کی گئی کہ ٹرائل کورٹ کے ملزمان کی سزائیں بحال کی جائیں اور ڈینیل پرل قتل کیس کے مرکزی ملزم احمد عمر شیخ کی سزائے موت بھی بحال کی جائے۔

توسیع

مزید :

صفحہ آخر -