سعودی شہری نے اپنی ماں کیلئے ایسا کام کر دکھایا کہ جو ہر کسی کی خواہش ہوتی ہے

سعودی شہری نے اپنی ماں کیلئے ایسا کام کر دکھایا کہ جو ہر کسی کی خواہش ہوتی ہے
سعودی شہری نے اپنی ماں کیلئے ایسا کام کر دکھایا کہ جو ہر کسی کی خواہش ہوتی ہے

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ایک بیٹے نے علیل والدہ کے صحت یاب ہونے پر اسے ہستپال سے گھر منتقل کرنے کے موقع کو ایک جشن میں تبدیل کردیا اور والدہ کا کچھ ایسا استقبال کیا کہ جس کی خبریں عالمی میڈیا تک جاپہنچیں۔

مزیدپڑھیں:300کلووزنی خاتون کو شہری دفاع کی مخصوص گاڑی کے ذریعے ہستپال منتقل کی گیا

نیوز ویب سائٹ سبق کے مطابق شمال مغربی شہر سقاقہ سے تعلق رکھنے والے شخص نے اپنی والدہ کو متاب بن عبدالعزیز ہسپتال سے گھر لانے کے لئے قیمتی گاڑی کو خوب سجایا اور خوب دھوم دھام کے ساتھ والدہ کو اس میں بٹھا کر گھر لایا۔ اس موقع پر جشن کا سماں پیدا ہوگیا اور دور و نزدیک کے لوگ اس تقریب کو دیکھنے کے لئے آگئے۔ والدہ کے استقبال کی تقریب کی زرق برق اور رونق کچھ ایسی تھی کہ میڈیا بھی اسے نظر انداز نہ کرسکا اور اس کی تصاویر مقامی میڈیا سے ہوتے ہوئے بین الاقوامی میڈیا میں بھی پہنچ گئیں۔

اس خبر پر انٹرنیٹ صارفین نے بھی خوب تبصرے کئے اور اکثر نے بیٹے کے جذبات کو خوب سراہا۔ سعید الفہمی نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ بیٹے نے ماں کے استقبال کے لئے جس اہتمام کا اظہار کیا ہے وہ قابل تعریف اور پیاری بات ہے اور دعا کی کہ یہ بیٹا ہمیشہ خوش رہے۔ اسی طرح فیصل نامی انٹرنیٹ صارف کا کہنا تھا کہ ان کی دعا ہے کہ ماں بیٹے کے درمیان یہ پیار ہمیشہ سلامت رہے۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ خدا سب بیٹوں کو اپنی ماﺅں سے اسی طرح پیار کی توفیق عطا فرمائے کیونکہ سب ماﺅں نے اسی طرح پیار کیا جانا چاہیے۔

دوسری جانب کچھ انٹرنیٹ صارفین نے تنقید بھی کی اور جذباتی بیٹے کے عمل کو نمود و نمائش قرار دیا۔عبداللہ نامی انٹرنیٹ صارف کا کہنا تھا کہ بہتر ہوتا کہ یہ صاحب اپنی والدہ کی صحتیابی کی خوشی میں خدا کا شکر اداکرتے اور اس کے غریب بندوں کی مدد کرتے، ناکہ لاکھوں کروڑوں کے خرچ سے گاڑیاں سجاتے اور جشن برپا کرتے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -