اخوت ہیلتھ سروسز کے زیر اہتمام رمضان اور ذیابیطس کے موضو ع پر سیمینار

اخوت ہیلتھ سروسز کے زیر اہتمام رمضان اور ذیابیطس کے موضو ع پر سیمینار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور( پ ر)اخوت ہیلتھ سروسز کے زیراہتمام مقامی شادی ہال، کالج روڈ میں ذیابیطس کے مرض میں مبتلا مریضوں کیلئے’’ رمضان اور ذیابیطس‘‘ کے عنوان سے ایک سیمینارکا اہتمام کیا گیا۔ جس میں ذیا بیطس کے ماہرین پروفیسر ڈاکٹرمحمود ناصر ملک، پروفیسر بلال بن یونس، ڈاکٹر عمران حسن خان، اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر نازیہ طاہر، ڈاکٹر طاہر رسول،ڈاکٹر عصمت لغاری ،غذائی معلومات کی ماہرڈاکٹر فائزہ کمال’ اخوت کے ڈائریکٹر ڈاکٹر اظہار ہا شمی‘مفتی محمد اسحق ساقی الازہری اور سول سوسائٹی کے علاوہ شوگر کے مریضوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ ڈاکٹرمحمود ناصر ملک نے کہا کہ روزہ نہ صرف گناہوں بلکہ بیماریوں کیخلاف بھی ڈھال ہے۔رمضان ضبط نفس اور اپنے آپ پہ قابو رکھنے کا نام ہے۔ رمضان میں بھی سمجھداری اور صحت مند طریقے سے کھانا کھائیں اور یاد رکھیں ضرورت سے زیادہ کھانا اور غلط کھانوں کا انتخاب ( مثلاً تلی ہوئی اور بیکری کی بنی ہوئی اشیاء، مٹھائیاں) زیادہ مقدار میں کھانے سے نہ صرف آپ کا وزن بڑھے گابلکہ یہ آپکے بلڈ گلو کوز کی سطح کو بھی زیادتی ا کی جانب لے جائے گا۔




کھانے کی مقدار معتدل رکھیں۔ ڈاکٹر عمران حسن نے کہا کہ روزے رکھنا ایک ذاتی فیصلہ ہے جس کو اپنے ڈاکٹر کے مشورے کے بعد کرنا چاہیے۔ ذیابیطس کے حامل کچھ لوگوں کے لئے روزہ رکھنا خطرناک ہو سکتا ہے یا ان کی صحت کیلئے مسائل کا سبب بن سکتا ہے۔ اس لئے ضروری ہے کہ روزے رکھنے سے پہلے اپنے ڈاکٹر سے رجوع کریں ۔ غذائی ماہر فائزہ کمال نے کہا کہ سحری کے وقت آپ کو نشاستہ دار کھانا کھانا چاہیئے جو جسم میں توانائی کو دیر تک بحال رکھتا ہے۔پروفیسر بلال بن یونس نے کہا کہ یاد رکھیں کہ تراویح ایک لمبی عبادت ہے جس کے دوران آپ ڈی ہائیڈ ریشن کا شکار ہو سکتے ہیں ۔ تراویح کے دوران ذیابیطس سے بچنے کیلئے یقینی بنائیں تاکہ افطار میں نشاستہ دار خوراک کھائیں کیونکہ یہ آہستہ آہستہ ہضم ہوتی ہے۔ افطار کے بعد کافی مقدار میں پانی پیں اور ترایح میں اپنے ساتھ پانی کی بوتل اور گلوکوز یا مشروب لے کر جائیں۔