تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم

تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان ...
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم
تحریک انصاف الیکشن ٹربیونل کے فیصلے ‘ جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک ‘ علیم خان کسی بھی عہدے کیلئے نااہل ‘ پارٹی سے نکالنے کا حکم

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)جسٹس ریٹائرڈ وجیہہ الدین کی سربراہی میں قائم تحریک انصاف کے الیکشن ٹریبونل نے جہانگیر ترین ، پرویز خٹک،نادر لغاری ، اور علیم خان کو کسی بھی حکومتی اور پارٹی عہدے کیلئے نااہل قرار دیتے ہوئے انہیں پارٹی سے نکالنے کا حکم دے دیا ہے جبکہ جہانگیر ترین اور نادر لغاری کو پارٹی میں واپس لینے پر بھی پابندی عائد کر دی ہے ۔ الیکشن ٹریبونل کا کہنا ہے کہ ان رہنماؤں نے پارٹی انتخابات کے دوران بے قاعدگیاں کیں ،پیسے کا استعمال کیا اور الیکشن ٹریبونل کے معاملات میں مداخلت کرتے رہے ۔ الیکشن ٹریبونل نے یہ بھی حکم دیا ہے کہ ان رہنماؤں میں سے جس کے پا س بھی قومی یا صوبائی اسمبلی میں کوئی ذمہ داری ہے وہ بھی ان سے واپس لے لی جائے۔ دریں اثناء نے الیکشن ٹریبونل نے قاسم خان، عارف علوی اور سیف اللہ نیازی کو بھی نوٹس جاری کر دیا ہے۔یاد رہے کہ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان پارٹی کے الیکشن ٹریبونل کو تحلیل کر چکے ہیں ۔دوسری جانب وزیر اعلی خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے الیکشن ٹریبونل کے فیصلے پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جسٹس (ر) وجیہہ الدین کو ایسے کسی فیصلے کا اختیار نہیں ہے وہ ذہنی طور پرٹھیک نہیں لگتے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے کور کمیٹی کے اجلاس میں تمام ٹریبونلز اور تنظیمیں توڑ دی تھیں میں کسی جسٹس وجیہہ الدین کونہیں جانتا اور نہ ہی میرے پاس کوئی پارٹی عہدہ ہے، عام کارکن ہوں میرا کسی سے کوئی جھگڑا نہیں ہے ۔تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ الیکشن ٹربیونل کہ دوبارہ پارٹی انتخابات کی سفارش کے بعد تحلیل کر دیا گیا تھا اب ٹربیونل کہ فیصلوں کا کوئی حق نہیں اور نہ ہی یہ حق ہے کہ سینئر راہنماؤں کو نشانہ بنائے اور ان کی توہین کرے۔

مزید :

صفحہ اول -