کالعدم تنظیموں اور خطرناک مجرموں کا کرائم ریکارڈ کمپیوٹرائزڈکیاجائے گا

کالعدم تنظیموں اور خطرناک مجرموں کا کرائم ریکارڈ کمپیوٹرائزڈکیاجائے گا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(کرائم سیل) پنجاب حکومت نے فورتھ شیڈول میں شامل کالعدم تنظیموں اور دیگرخطرناک مجرموں کی نقل وحرکت پر نظر رکھنے کیلئے اور ان کا کرائم ریکارڈ کمپیوٹرائزڈ کرنے کے لئے پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈسے رابطہ کر لیا۔ محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے پی آٗئی ٹی بی کے ذمہ داران کو کہا گیا ہے کہ فورتھ شیڈول میں شامل افراد کے حوالے سے ایک ایسا سوفٹ وئیر بنایا جائے کہ فورتھ شیڈول میں شامل اور فورتھ شیڈول سے خارج ہونے والے افراد کا ریکارڈ کمپیوٹرائزڈ ہو جائے اور یہ ریکارڈ کاونٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ اور محکمہ داخلہ کی ویب سائٹ پر ہو لیکن اس ریکارڈ کو ایک خفیہ کوڈ لگایا جائے تاکہ صرف متعلقہ ادارے ہی دیکھ سکیں ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ اس وقت پنجاب میں فورتھ شیڈول میں شامل افراد کی تعداد 1417 ہے لیکن یہ تمام ریکارڈ منیول تیار کیا جاتا ہے جس کی وجہ سے محکمہ داخلہ اور دیگر خفیہ اداروں کے درمیان رابطہ نہیں ہو پاتا بلکہ اگر کوئی فورتھ شیڈول میں شامل شخص فورتھ شیڈول قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کسی اور جگہ جاتا ہے تو دوسرے علاقے کی پولیس کو اس کے متعلق کوئی معلومات نہیں ہوتیں لہذا پی آئی ٹی بورڈ متعلقہ فورتھ شیڈول میں شامل شخص کے شناختی کارڈ نمبر کے ساتھ ایک خفیہ کوڈ بھی لگائے گا جس سے آئندہ نہ صرف ا س شخص کی نقل وحرکت کو مانیٹر کیا جا سکے گا بلکہ اس کی ہسٹری بھی معلوم ہو سکے گی۔
کرائم ریکارڈ

مزید :

علاقائی -