اسلامی تشخص برقرار رکھنے کیلئے اسلام کے سنہری اصولوں پر عمل پیرا ہونا ہو گا،ذکر اللہ مجاہد

اسلامی تشخص برقرار رکھنے کیلئے اسلام کے سنہری اصولوں پر عمل پیرا ہونا ہو ...

لاہور (پ ر) امیر جماعت اسلامی لاہورذکر اللہ مجاہدنے کہا کہ ملک کے اسلامی تشخص کو برقرار رکھنے کیلئے اسلام کے سنہری اصولوں پر عمل پیرا ہونا ہو گا۔ان خیالات کا اظہار گذشتہ روز انہوں نے دفتر جماعت اسلامی لاہور میں صحافیوں کے اعزاز میں دئیے گئے افطار ڈنر سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔افطار ڈنر میں ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات پاکستان قیصر شریف ، صدر الخدمت فاؤنڈیشن لاہور عبدالعزیز عابد ، جے آئی یوتھ لاہور کے صدر شاہد نوید ملک اور و دیگر رہنماؤں نے شرکت کی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کروڑوں مسلمانوں کی پرسوز دعاؤں ، دوسوسال کی تمناؤں وآرزوؤں اور ایک صدی کی بے مثال قربانیوں کا مظہر اور ترجمان ہے مگر بدقسمتی سے آج تک ہمارے حکمرانوں نے اسلام کے نام پر وجود میں آنے ریاست میں اسلامی نظام کے نفاذ کیلئے عملی اقدامات نہیں کئے ۔ ذکر اللہ مجاہد نے کہا کہ اس وقت ملک کوکمر توڑ مہنگائی ، اقرباپروری ، خاندانی سیاست ، بے حجابی ، بے حیائی اور جبر و تشدد جیسے بے شمار مسائل کاسامنا ہے جن کا واحد حل اسلامی نظام میں پوشیدہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہندی رسوم و رواج اور طور طریقے ہمارے گھروں اور معاشرے میں اسلامی تشخص کو نقصان پہنچا رہے ہیں،آج کی ماؤں ، بیٹیوں اور بہنوں کو ہندووانہ لباس اور طور طریقے اپنانے تھے تو پھر آزادی کے نام پر دی جانے والی عصمتوں کی قربانیوں کا مقصد کیا تھا ؟ آج ہمارا معاشرہ کفار کے جال اور روشن خیالی کی دلدل میں دھنس چکا ہے ۔ذکر اللہ مجاہد نے کہا کہ تمام آرزوؤں کی تکمیل اور پاکستان کے اسلامی تشخص کو برقرار رکھنے کے لیے اسلام کے سنہری اصولوں پر عمل پیرا ہونا ہو گااورقرآن و سنت تمام روشن تعلیمات کو ملک میں عام کرنا ہوگااور اسی

مقصدکے تحت جماعت اسلامی جدوجہد کررہی ہے کہ اسلامی نظام عدل کو فروغ دیا جائے جہاں پر عوام کوامن و سلامتی ، عزت ووقار ، عدل ومساوات ، اخوت ، حریت ، جمہوریت اسلام کی مضبوطی سے حاصل ہو

مزید : میٹروپولیٹن 1