رواں سال گوادر میں بین الاقوامی ہوائی اڈے کی تعمیر کا آغاز ہو جائیگا ، وزارت منصوبہ بندی

رواں سال گوادر میں بین الاقوامی ہوائی اڈے کی تعمیر کا آغاز ہو جائیگا ، وزارت ...

اسلام آباد (اے پی پی) رواں سال گوادر میں تعمیر و ترقی کا سال ثابت ہونے جا رہا ہے، سی پیک کے تحت رواں سال بجلی اور انفراسٹرکچر کے متعدد منصوبوں کے ساتھ ساتھ سب سے اہم گوادر بین الاقوامی ہوائی اڈے پر تعمیراتی کا م کا آغاز ہو جائے گا، منصوبہ دو سے تین سالوں میں دوست ملک چین کی جانب سے دی جانے والی گرانٹ کی مدد سے مکمل کیا جائے گا۔ وزارت منصوبہ بندی کے حکام نے بتایا کہ وزیراعظم پاکستان کے حالیہ دورہ چین کے دوران چینی حکومت کی جانب سے گوادر انٹرنیشنل ائرپورٹ کی تعمیر کے لئے گرانٹ منظور کرلی گئی تھی، گرانٹ منظوری کے بعد حکومت نے ایئر پورٹ کے تعمیراتی منصوبے پر کام تیز کردیا ہے، ایئر پورٹ کی تعمیر کے لئے 4300 ایکڑ اراضی مختص کردی گئی ہے۔ حکومت نے پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی کواس پراجیکٹ کی تیز تر تکمیل یقینی بنانے کی ہدایت کردی ہے۔ ذرائع کے مطابق گوادر کی بندرگاہ پر 230 ملین ڈالرز کی لاگت سے تعمیر ہونے والے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر دنیا کے سب سے بڑے مسافر بردار طیارے ’اے 380‘ کے اترنے کی سہولت موجود ہو گی۔ گوادر ائر پورٹ کی تکمیل سے بلوچستان باالخصوص گوادر میں جد ید سفری سہولیات میسر آئیں گی جس سے نہ صرف آمد و رفت میں آسانی ہوگی بلکہ بڑے پیمانے پر اقتصادی سرگرمیوں کا آغاز ہوگا۔ اس منصوبے سے ہزاروں کی تعداد میں مقامی افراد کو بلا واسطہ اور بالواسطہ روزگار کے مواقع میسر آئیں گے۔ گوادر ایئر پورٹ کے ساتھ ساتھ گوادر ماسٹر سٹی پلان، ایسٹ بے ایکسپریس وے، گوادار ہسپتال کی اپ گریڈیشن اور آب نوشی منصوبوں پر بھی کام تیز کر دیا گیا ہے۔ ان منصوبوں کی تکمیل سے گوادردنیا کے جدید شہروں کے صف میں شامل ہوجائے گا،

حکومت پاکستان نے بلوچستان کے عوام کی سماجی و اقتصادی بہبود، انفراسٹرکچر، توانائی اور صحت کی سہولیات سمیت یہاں کی ترقی پر توجہ مرکوز کر رکھی ہے، سی پیک کی صورت میں جاری منصوبہ نہ صرف علاقائی روابط کیلئے اہم ہوگابلکہ بلوچستان سمیت پاکستان کے تمام صوبوں کی تقدیر بد ل کر رکھ دے گا۔

مزید : کامرس