امریکہ کو دشمن نہیں سمجھتے

امریکہ کو دشمن نہیں سمجھتے
 امریکہ کو دشمن نہیں سمجھتے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ماسکو (مانیٹرنگ ڈیسک) روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے کہا ہے کہ وہ امریکہ کو دشمن نہیں سمجھتے اور ہر وقت مذاکرات کیلئے تیار رہتے ہیں۔عوام کے ساتھ براہ راست سوالات و جوابات کے سالانہ سیشن کے دوران گفتگو کرتے ہوئے روسی صدر کا کہنا تھا کہ ہم امریکہ کو دشمن کی طرح نہیں دیکھتے، روس ہر وقت امریکہ سے مذاکرات کیلئے تیار رہتا ہے خواہ وہ ہتھیاروں میں کمی ہو یا پھر شام کا مسئلہ ، ہم ہر وقت ان پر بات کرنے کیلئے تیار ہیں۔روس اور کریمیا کو ملانے والے پل کی تعمیر پر گفتگو کرتے ہوئے ولادی میر پیوٹن نے کہا کہ روس کو کریمیا سے ملانے والے پل کی تعمیر اپنے وقت پر مکمل ہو رہی ہے اور اس کی تعمیر شیڈول کے مطابق چلتی رہے گی۔ واضح رہے کہ کیرچ سٹریٹ سے سٹروئیگاز مونتاز کے درمیان روس نے 19 کلومیٹر طویل کی تعمیر شروع کر رکھی ہے۔ یہ پل اگلے سال کے آخر تک آپریشنل ہو جائے گا جس کے بعد روس اور کریمیا براہ راست ایک دوسرے سے مل جائیں گے۔ خیال رہے کہ روس نے 2014 میں یوکرائن پر حملہ کرکے کریمیا پر قبضہ کرلیا تھا۔انہوں نے اپوزیشن پر بھی کڑی تنقید کی اور کہا کہ اپوزیشن ارکان عوامی مسائل کی ٹھیک طریقے سے نشاندہی نہیں کر رہے بلکہ عوامی مسائل پر سیاست کر رہے ہیں، انہیں ایسا کرنے سے گریز کرنا اور مسائل کا حل بتانا چاہیے۔ وہ لوگ جو آپ کو مسائل کا حل بتاتے ہیں وہ توجہ کے مستحق ہوتے ہیں اور ہم اسی طریقے سے کام کرتے ہیں

مزید : صفحہ اول