بکریوں کے ساتھ یوگا151امریکیوں کا نیا شوق

بکریوں کے ساتھ یوگا151امریکیوں کا نیا شوق

لاس اینجلس(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکا میں آغاز ہوا ہے ایک ایسے منفرد یوگا کلب کا جہاں کلاسز لینے کے لیے ہر عمر کے افراد کا تانتا بندھ گیا ہے، جس کی وجہ یہاں بڑی تعداد میں چھوٹی چھوٹی بکریوں کی موجودگی ہے۔گوٹ یوگا' نامی اس کلب میں یوگا سیکھنے کے شوقین افراد 'نمستے' کہنا سیکھنے کے ساتھ ساتھ جسمانی، دماغی اور روحانی سکون حاصل کرتے ہیں اور درجن کی تعداد میں موجود بکریوں کی اٹکھیلیوں سے محظوظ بھی ہوتے ہیں۔واضح رہے کہ یوگا کو دل، دماغ اور جسم تینوں کی ورزش قرار دیا جاتا ہے، ہندومت اور بدھ مت کا ایک قدیم روحانی عمل سمجھی جانے والی یہ ورزش اب دنیا بھر کے لوگوں میں خاصی مقبول ہوچکی ہے۔لیکن امریکا کے اس یوگا کلب میں بکریوں کو متعارف کرانے کی آخر کیا وجہ ہے؟ ملک کے فارمز میں چھوٹی نسل کی نائجیرین اور ویسٹ افریقی بکریوں کو آخر کیوں کھلا چھوڑ دیا گیا؟ اس حوالے سے اس کلب میں یوگا کے لیے آنے والے افراد کچھ یوں اظہار خیال کرتے ہیں۔لاس اینجلس کے مضافاتی علاقے میں اپنی پہلی گوٹ یوگا کلاس میں شرکت کرنے والی 53 سالہ ابراہیمی کہتی ہیں کہ 'پہلے پہل یہ تجربہ ان کے لیے کچھ ڈراؤنا تھا کیونکہ انہیں اس بات کا علم نہیں تھا کہ بکریاں ان کی کمر پر چڑھ جائیں گی۔ابراہیمی کے مطابق 'لیکن جب آپ اس ماحول کو محسوس کرتے ہیں، جانور کی موجودگی میں آپ گھاس پھوس پر لیٹے ہوئے ہیں، سورج چمک رہا ہے اور درخت، نیلا آسمان آپ کے ارد گرد ہے تو یہ سب بہت آرام دہ اور اچھا لگتا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4