میلسی‘ تحصیل سینیٹری انسپکٹر پاپڑ فیکٹری مالک سے رشوت لیتے رنگے ہاتھوں گرفتار

میلسی‘ تحصیل سینیٹری انسپکٹر پاپڑ فیکٹری مالک سے رشوت لیتے رنگے ہاتھوں ...

میلسی(نمائندہ پاکستان) علاقہ مجسٹریٹ اور اینٹی کرپشن حکام نے میلسی کے کرپشن کنگ تحصیل سینٹری انسپکٹر رضوان بابر کو پاپڑ فیکٹری مالک سے رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کر لیا ۔تفصیل کیمطابق چند روز قبل میلسی شہر میں قائم ناقص پاپڑ نمکو وغیرہ تیار کرنے کی فیکٹری کی نشاندہی کی گئی اور خفیہ اداروں کی معاونت سے تحصیل سینٹری انسپکٹر رضوان بابر نے دیگر متعلقہ افسران کے ہمراہ چھاپہ مار کر فیکٹری(بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

سے ناقص اشیاء برآمد کر لیں لیکن فیکٹری کو جان بوجھ کر سیل نہ کیا اور نہ ہی مقدمہ درج کرایا گیا گذشتہ روز کرپشن کنگ رضوان بابر نے فیکٹری کے مالک محمد خالد کو اپنے دفتر بلوایا اور 30ہزار روپے کی رشوت طلب کی اس دوران محمد خالد نے اینٹی کرپشن حکام کو آگاہ کر دیا اور کاروائی ختم کرانے کیلئے رضوان بابر کو 20ہزار روپے دے دیئے اس دوران اینٹی کرپشن حکام نے علاقہ مجسٹریٹ کے ہمراہ چھاپہ مار کر رشوت کی مد میں وصول کیئے گئے 20ہزار کے کرنسی نوٹ رضوان بابر سے برآمد کر لیئے اس موقع پر فیکٹری مالک نے بتایا کہ ہم تحصیل سینٹری انسپکٹر کو 8ہزار منتھلی دیتے رہے ہیں لیکن اب وہ 30ہزار روپے مانگ رہا تھا اینٹی کرپشن وہاڑی نے ملزم کو تحویل میں لیکر قانونی کاروائی شروع کر دی ہے واضح رہے کہ رضوان بابر گذشتہ دس سال سے تعینات تھا جسے چند ماہ قبل کرپشن کی شکایت پر تبدیل کیا گیا لیکن وہ سفارش کی بناء پر دوبارہ تعینات ہو گیا اور لوٹ مار کا بازار گرم کر رکھا تھا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر