کراچی ،جیل سے فرار قیدیوں کی تلاش ،پولیس کے مختلف علاقوں میں چھاپے

کراچی ،جیل سے فرار قیدیوں کی تلاش ،پولیس کے مختلف علاقوں میں چھاپے

کراچی(کرائم رپورٹر)سینٹرل جیل کراچی سے گزشتہ روز فرار ہونے والے 2 قیدیوں کی تلاش میں مختلف علاقوں میں تابڑ توڑ چھاپے مارے جارہے ہیں اور اس دوران 6 مشتبہ افراد کو حراست میں بھی لیا گیا ہے۔پولیس کے مطابق دوروزقبل کراچی سینٹرل جیل سے فرارہونے والے دونوں قیدی اب تک پولیس کے ہاتھ نہیں لگ سکے ہیں، دونوں قیدیوں کی تلاش میں پولیس کی جانب سے قائد آباد ، گلشن اقبال، لیموں گوٹھ ، غوثیہ کالونی، پی آئی بی کالونی اورلانڈھی میں چھاپے مارے گئے ہیں جب کہ کینٹ اسٹیشن، بس اڈوں اورکراچی سے باہرجانے والے راستوں کی ناکہ بندی سخت کردی گئی ہے۔ اس کے علاوہ مختلف علاقوں سے 6 مشتبہ افراد کوحراست میں بھی لیا گیا ہے۔پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ شیخ محمد ممتازعرف فرعون عرف شیرخان عرف شہزاد عرف بھائی ولد شیخ محمد مسلم عرف شیخ محمد اسلم عرف محمد سلیم اور محمد احمد خان عرف منا ولد محمد شفیع کوفرارکرانے میں جیل کا عملہ مبینہ طور پر ملوث ہوسکتا ہے کیونکہ دونوں قیدی جیل میں سرونٹ کوارٹر میں پناہ لینے کے بعد جیل سے فرار ہوئے۔واضح رہے کہ کالعدم لشکر جھنگوی اورکالعدم تحریک طالبان پاکستان سے تعلق رکھنے والے 2 خطرناک دہشت گرد شیخ محمد ممتازعرف فرعون عرف شیرخان عرف شہزاد عرف بھائی ولد شیخ محمد مسلم عرف شیخ محمد اسلم عرف محمد سلیم اور محمد احمد خان عرف منا ولد محمد شفیع منگل کی شب فرارہوگئے تھے، فراردہشت گردوں کو چند سال قبل سی ٹی ڈی پولیس نے قتل، اقدام قتل، بھتہ خوری اور بم دھماکے میں ملوث ہونے پر گرفتارکیا تھا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر