’ہم دونوں میاں بیوی ہفتے میں صرف 3 مرتبہ کھانا کھاتے ہیں اور باقی دن۔۔۔‘ نوجوان جوڑے نے انتہائی حیران کن بات کہہ دی، کھائے پئیے بغیر پیٹ کیسے بھرتے ہیں؟ جان کر آپ کا بھی منہ کھلا کا کھلا رہ جائے گا

’ہم دونوں میاں بیوی ہفتے میں صرف 3 مرتبہ کھانا کھاتے ہیں اور باقی دن۔۔۔‘ ...
’ہم دونوں میاں بیوی ہفتے میں صرف 3 مرتبہ کھانا کھاتے ہیں اور باقی دن۔۔۔‘ نوجوان جوڑے نے انتہائی حیران کن بات کہہ دی، کھائے پئیے بغیر پیٹ کیسے بھرتے ہیں؟ جان کر آپ کا بھی منہ کھلا کا کھلا رہ جائے گا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)امریکہ میں ایک میاں بیوی نے حیران کن طور پر انکشاف کیا ہے کہ وہ ہفتے میں صرف تین بار کھانا کھاتے ہیں۔ اور باقی اوقات میں ایک ایسی چیز سے پیٹ بھرتے ہیں کہ سن کر آپ کے لیے یقین کرنا مشکل ہو جائے گا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق کیلیفورنیا اور ایکواڈور کے درمیان رہنے والے 36سالہ اکاہی ریکارڈو اور اس کی 34سالہ بیوی کیمیلا کیسٹیلو کا کہنا ہے کہ ”ہفتے میں تین بار کھانا کھانے کے بعد باقی دنوں میں وہ ”کائنات کی توانائی“ سے اپنا پیٹ بھرتے ہیں اور جسم کے لیے درکار توانائی اس سے حاصل کرتے ہیں۔

سالگرہ کا تحفہ، شوہر نے اپنی بیگم کو ٹرین کی پٹڑی سے باندھ دیا اور پھر خود۔۔۔ ایسا خوفناک ترین تحفہ تاریخ میں کبھی کسی نے کسی کو نہ دیا ہوگا

ان دونوں کے دو بچے بھی ہیں۔ کیمیلا کیسٹیلو نے بتایا کہ پہلی بار جب وہ ماں بننے والی تھی تو تمام حمل کے دوران اس نے صرف 5بار ٹھوس غذا کھائی تھی۔ ان کا کہنا ہے کہ ہفتے میں تین بار جو کھانا وہ کھاتے ہیں وہ بھی سبزیوں کی یخنی اور کچھ پھل ہوتے ہیں۔ کیمیلا کا کہنا تھا کہ ”کائنات کی ہر چیز میں ایک توانائی موجود ہوتی ہے جو انسان سانس اور جسم کے ذریعے حاصل کر سکتا ہے۔ اگر انسان کائنات کی توانائی سے منسلک ہو جائے تو وہ خوراک کے بغیر آسانی سے زندہ رہ سکتاہے۔ تین سال تک مسلسل میں نے اور اکاہی نے کچھ بھی نہیں کھایا تھا۔ اب ہم گاہے کچھ نہ کچھ کھا لیتے ہیں اور آج بھی اگر ہم کچھ کھاتے ہیں تو اس کی وجہ بھوک نہیں ہوتی۔“اکاہی کا کہنا تھا کہ ”ہم کائنات کی توانائی پر زندہ ہیں، مکمل صحت مند ہیں اور خوش ہیں۔ ہماراکھانے پر خرچ چونکہ دوسرے خاندانوں کی نسبت بہت کم ہوتا ہے لہٰذا ہم سفر اور سیروتفریح پر زیادہ رقم خرچ کرتے ہیں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس