کن لوگوں کو سگریٹ پینے کی لت زیادہ جلدی لگ جاتی ہے؟ تازہ تحقیق میں حیران کن انکشاف

کن لوگوں کو سگریٹ پینے کی لت زیادہ جلدی لگ جاتی ہے؟ تازہ تحقیق میں حیران کن ...
کن لوگوں کو سگریٹ پینے کی لت زیادہ جلدی لگ جاتی ہے؟ تازہ تحقیق میں حیران کن انکشاف

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) اگر آپ سگریٹ سے بچنا چاہتے ہیں یا اس کی لت میں مبتلا ہیں اور اسے چھوڑنا چاہتے ہیں تو اپنی تنہائی ختم کرنے کی کوشش کریں کیونکہ برطانوی ماہرین نے نئی تحقیق میں سگریٹ نوشی اور تنہائی کے درمیان گہرے تعلق کا انکشاف کر دیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق ماہرین نے بتایا ہے کہ جو لوگ طویل عرصے تک تنہائی کا شکار رہتے ہیں ایک طرف ان کے سگریٹ نوشی کی لت میں مبتلا ہونے کا خدشہ زیادہ ہوتا ہے اوردوسری طرف ایسے لوگوں کے لیے سگریٹ نوشی ترک کرنا بہت مشکل ثابت ہوتا ہے۔

یونیورسٹی آف برسٹل کے سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ سگریٹ نوش افراد اگر تنہائی کا شکار ہوں تو وہ پہلے سے زیادہ سگریٹ پینے لگتے ہیں اور ان کی یہ لت شدید تر ہو جاتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ لاک ڈاﺅن کے دوران جہاں سگریٹ نوشوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے وہیں پہلے سے سگریٹ پینے والے افراد کے زیادہ سگریٹ پینے کی شرح میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ ڈاکٹر روبن ووٹن کا کہنا تھا کہ ہم نے تحقیق کے لیے جو ڈیٹا حاصل کیا اس سے معلوم ہوا کہ لاک ڈاﺅن کی وجہ سے برطانیہ میں 22لاکھ لوگ پہلے سے زیادہ سگریٹ پینے لگے ہیں۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ لاک ڈاﺅن کے دوران لوگ جتنے تنہائی کا شکار ہوئے ہیں، ماضی میں اس کی مثال نہیں ملتی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -