راولپنڈی چیمبر کے وفد کی کرغزستان کے پارلیمانی وفد سے ملاقات

راولپنڈی چیمبر کے وفد کی کرغزستان کے پارلیمانی وفد سے ملاقات

راولپنڈی(کامرس ڈیسک) وسطی ایشیائی ریاستوں خاص طور پر کرغستان کے ساتھ باہمی تجارت کے وسیع مواقع موجود ہیں علاقائی تجارت کو فروغ دے کر ملکی برآمدات میں اضافہ کیا جا سکتا ہے ہمیں نئی منڈیاں تلاش کرنے کی ضرورت ہے چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ (سی پیک) پاکستان اوروسطی ایشائی ممالک کے ساتھ علاقائی تجارت کے فروغ کے لیے نیٹ ورکنگ کا کردار ادا کرے گا ا ن خیالات کا اظہار راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر راجہ عامر اقبال نے اسلام آباد میں کرغستان کے پارلیمانی وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا وفد میں کرغستان کی پارلیمنٹ کے اسپیکر Chynnybai Tursunbekov، نائب وزیر خارجہ عظمت یوزنوف، سفیر ایرک بشیم بیف و دیگر کرغستان ارکان پارلیمنٹ بھی شامل تھے اس موقع پر سینئر نائب صدرر اشد وائیں، نائب صدر عاصم ملک، مجلس عاملہ کے اراکین اور ممبران چیمبر بھی موجود تھے اسپیکر چنی بائے ترسن بکوف نے راولپنڈی چیمبر کے صدر راجہ عامر اقبال کو بتایا کہ ان کے وفد کا دورہ پاکستان کا مقصد دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں توانائی، انفراسٹرکچر میں تعاون بڑھانے کے ساتھ ساتھ تاجر برادری سے ملاقاتیں بھی کرنا ہے تاکہ تجارتی مواقعوں کو تلاش کیا جاسکے تاکہ علاقائی تجارت کو فروغ حاصل ہو ملاقات میں انفارمیشن ٹیکنالوجی، فارما سیوٹیکل ، اسپورٹس گڈز، رائس،ماربل اور ٹیکسٹائل مصنوعات کے شعبے میں دو طرفہ تجارت بڑھانے کے مواقعوں پر بھی تفصیل سے بات کی گئی اور مختلف شعبوں میں باہمی رابطہ بڑھانے اور معلومات کی فراہمی کے لیے ایم اویو دستخط کرنے کے حوالے سے بھی گفتگو کی گئی۔

راجہ عامر اقبال نے کرغستان کے وفد کو راولپنڈی چیمبر آف کامرس کی جاری سرگرمیوں کے بارے میں بتایا انہوں نے پاکستان افغانستان وسطی ایشیا ٹریڈ سمٹ اور کانفرنس PACTS کے حوالے سے پیش رفت سے بھی آگاہ کیا انہوں نے وفد کو بتایا کہ سی پیک علاقائی تجارت کے فروغ کے لئے اہم سنگ میل ثابت ہو گا اوراس منصوبے سے پاکستان وسطی ایشیائی ممالک سمیت ایران،افغانستان اور دیگر ممالک کی تجارتی سرگرمیوں کا محور بن جائے گا

مزید : کامرس


loading...