دہشتگردوں کو کیفر کردار تک پہچانے کیلئے فوجی عدالتیں جلد قائم کی جائیں: حاجی محمد حنیف طیب

دہشتگردوں کو کیفر کردار تک پہچانے کیلئے فوجی عدالتیں جلد قائم کی جائیں: حاجی ...

جدہ (محمد اکرم اسد) سابق وفاقی وزیر و اوورسیز پاکستانیز و پٹرولیم و قدرتی مسائل حاجی محمد حنیف طیب نے کہا ہے کہ دہشتگرد کسی رعایت کے مستحق نہیں ان کی سزاؤں پر فوری عملدرآمد ہونا چاہیے، فوجی عدالتوں کا قیام وقت کا تقاضہ ہے ان کا قیام جلد سے جلد ہوجانا چاہیے تاکہ دہشتگرد جو عوام کی جانوں سے کھیلتے ہیں ان کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے میمن بزنس کمیونٹی کے عشائیہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وہ ان دنوں عمرہ کی ادائیگی روضہ ر سول ﷺ پر حاضری کے لئے آئے ہوئے ہیں۔ حاجی محمد حنیف طیب نے کہا کہ کراچی کا امن بحال کرنے میں رینجرز اور پولیس نے بڑی قربانیاں دی ہیں اور اب رینجرز کی کوششوں سے کراچی میں امن قائم ہوا ہے اور کاروباریا دارے بلا خوف و خطر اور کسی دھمکی کو خطر میں نہ لاتے ہوئے اپنا کام آزادی سے کررہے ہیں جبکہ کراچی کی مارکیوں کی رونقیں دوبارہ بحال ہوگئی ہیں جبکہ ماضی میں یہ ناپید تھیں۔ حاجی محمد حنیف طیب نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ دہشتگردوں کا کوئی مذہب نہیں ہوتا یہی وجہ ہے یہ حملے مساجد، امام بارگاہوں، سکولوں جیسی جگہوں کو نشانہ بناتے ہیں جس سے بے گناہ شہری اپنی جانیں گنوادیتے ہیں ، کئی خواتین کو بیوہ بنانا بچوں کو یتیم کردینا، نہ خواتین کا خیال اور نہ بوڑھوں کا یہ کیسے دہشتگرد ہیں جو اسطرح کے کاموں سے نیک نامی یا جنت کے طلبگار بننا چاہتے ہیں۔ دوسری طرف بدقسمتی یہ ہے کہ ان کا تعلق ایک ملک کے مدرسوں سے نکل آتا ہے۔ حاجی محمد حنیف طیب جو نظام مصطفی پارٹی کے صدر اور مصطفی ویلفیئر ٹرسٹ کے سربراہ بھی ہیں نے کہا کہ پاکستان میں سب سے زیادہ خیراتی کام ہوتا ہے جس میں پاکستانی بڑھ چڑھ کر حصہ لیتے ہیں جبکہ مصطفی ویلفیئر ٹرسٹ بھی پورے پاکستان میں مختلف فیلڈ میں خدمت سرانجام دے رہا ہے اور اس کا دائرہ عمل بڑھتا جارہا ہے۔ انہوں نے ایدھی ٹرسٹ کے فیصل ایدھی کو قتل کی دھمکیوں کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے خود بھی ان سے رابطہ کیا تھا، ہم ہر طرح کی ان کی مدد کرنے کے لئے تیار ہیں۔ عبدالستار ایدھی اور بلقیس ایدھی کی اس فیلڈ میں بڑی خدمات ہیں۔ حاجی محمد حنیف طیب نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیز ملک میں زرمبادلہ کی شکل میں اپنی بچتیں بھیج کر حب الوطنی کا ثبوت دے رہے ہیں۔ ان کی خدمات کو بھی مدنظر رکھنا چاہیے۔ انہوں نے سعودی عرب کی طرف سے حرمین شریفین میں زائرین کی سہولت کے لئے کی گئی وسعت اور سہولتوں کو سراہتے ہوئے خادم حرمین شریفین اور ان کی حکومت کی تعریف کی۔ عشائیہ کی صدارت اسرار احمد رحمانی نے کی۔ عشائیہ میں عبدالمناف، عبدالغفار، منصور شہوانی، آصف مناس، سلمان منہاس، احسن ایوب، نعیم اختر، سید ابوالحسن، مہر قیصر اور نعیم باہر سمیت میمن کمیونٹی کے اراکین نے شرکت کی۔

مزید : عالمی منظر


loading...