مقبوضہ کشمیر ،بھارتی فوج نے 3کشمیریوں کو دہشت گرد قرار دیکر شہید کر دیا،10سالہ بچی اور نوجوان کوگولی ماردی

مقبوضہ کشمیر ،بھارتی فوج نے 3کشمیریوں کو دہشت گرد قرار دیکر شہید کر ...

کپواڑہ/سرینگر ( آن لائن)مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج وادی میں آزادی کی بڑھتی ہوئی تحریک سے بوکھلا گئی ،3کشمیری حریت پسندوں کو دہشت گرد قرار دے کے جعلی مقابلے میں شہید کر دیا ،اندھا دھند فائرنگ سے 10سالہ معصوم کشمیری مسلمان بچی کنزا بھی شہید ،ننھی کنزا کا بھائی فیصل شدید زخمی ہو گیا۔بھارتی نجی ٹی وی چینل ’’این ڈی ٹی وی ‘‘ کے مطا بق سیکیورٹی فورسز کے ساتھ ہونے والے تصادم کے نتیجے میں تین کشمیری مجاہدین شہید ہو گئے جبکہ 100میٹر کی دوری پر اپنے گھر کے باہر کھیلتی ہوئی ننھی کنز ا بھارتی فوج کی گولی لگنے سے شہید جبکہ اس کا بھائی فیصل شدید زخمی ہو گیا۔دوسری طرف ’’ہندوستان ٹائمز‘‘کا کہنا ہے کہ ننھی کنزا کی عمر 7سے 10سال کے درمیان بتائی جا رہی ہے۔ پولیس ترجمان نے ننھی کنزا کی شہادت کی تصدیق کر دی ہے۔بھارتی سیکیورٹی فورسز نے دعوی کیا کہ پورے علاقے کو گھیر کر گھر گھر تلاشی کا سلسلہ شروع کیا تو اس دوران ایک گھر میں چھپے مجاہدین نے بھارتی فوج پر فائرنگ شروع کر دی ،جوابی فائرنگ میں تینوں نامعلوم مجاہدین شہید ہو گئے ۔ کنزاکے بھائی فیصل کو تشویش ناک حالت میں سری نگر منتقل کر دیا گیا ہے۔ دریں اثناء ضلع کپواڑہ کے علاقے چاگتبالا میں بھارتی فوجیوں نے تلاشی اور سرچ آپریشن کے دوران فائرنگ کر کے ایک نوجوان کو شہید کر دیاجبکہ لبریشن فرنٹ کے ضلعی صدر عبدالستار کو کلگام میں ان کے گھر سے گرفتار کر لیا۔

مزید : علاقائی


loading...