انتخابات میں جدید ٹیکنالوجی ، 100بائیو میٹرک مشینوں کی خریداری کا معاہدہ

انتخابات میں جدید ٹیکنالوجی ، 100بائیو میٹرک مشینوں کی خریداری کا معاہدہ

اسلام آباد(آن لائن) الیکشن کمیشن نے انتخابات میں جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کیلئے 100بائیو میٹرک ویریفیکیشن مشینوں کی خریداری کے معاہدے پر دستخط کر دئیے ہیں ،معاہدے کے تحت سیکیور ٹیک کمپنی اگلے 70دنوں میں جدید ٹیکنالوجی کی حامل بائیو میٹرک مشینیں فراہم کرے گی جسے آئندہ ضمنی انتخابات میں تجرباتی طور پر استعمال کیا جائے گا،مشینوں پر ایک کروڑ 60لاکھ روپے اخراجات آئیں گے الیکشن کمیشن آف پاکستان میں بائیو میٹرک ویریفیکیشن مشینوں کی خریداری کے معاہدوں پر دستخطوں کی تقریب ہوئی اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سیکرٹری الیکشن کمیشن نے بتایاکہ الیکشن کمیشن نے بائیو میٹرک مشینوں کی خریداری کیلئے گذشتہ سال عالمی سطح پر ٹینڈر جاری کئے تھے۔ کئی ملکی و غیر ملکی کمپنیوں نے اس میں حصہ لیا تھا الیکشن کمیشن نے الیکٹرانک ووٹنگ اور بائیو میٹرک مشینوں کی خریداری کیلئے ٹینڈر جاری کرنے کے ساتھ ساتھ پارلیمنٹ کی انتخابی اصلاحات کمیٹی سمیت مختلف سٹیک ہولڈروں کے ساتھ مشاورت کا سلسلہ جاری رکھا انہوں نے بتایاکہ ابتدائی طورپر 150الیکٹرانک ووٹنگ اور 100 بائیو میٹرک مشینوں کی خریداری کا معاہدہ کیا گیا ہے جو اگلے 10ہفتوں کے دوران فراہم کی جائیں گی ۔ مجموعی طور پر ان مشینوں پر 3کروڑ50ہزار روپے خرچہ آئے گا۔ ان مشینوں کی سپلائی کے بعد فوری طور پر آنے والے ضمنی انتخابات میں تجرباتی طور پر اس کا استعمال کیا جائے گا۔الیکشن کمیشن کے ڈائریکٹر جنرل آئی ٹی نے کہاہے کہ خریدی جانے والی بائیو میٹرک ویری فکیشن مشینیں انتہائی جدید ٹیکنالوجی کی حامل ہیں ان میں کسی قسم کی ہیرا پھیری یا چھیڑچھاڑ کرنے کی کوئی گنجائش نہیں۔ بائیو میٹرک مشینوں میں ڈیٹا سٹور کرنے کی گنجائش موجود ہے اور اگر ان مشینوں کو چھڑنے یا ٹیمپر کرنے کی کوشش کی جائے تو اس میں موجود تمام ڈیٹا فوری طور پر ختم ہوجائے گا۔ ہری پور کے ضمنی الیکشن میں استعمال ہونیو الے بائیو میٹرک مشینوں کی کارکردگی 60فیصد رہی ہے اور ہمیں امید ہے کہ یہ مشینیں زیادہ کامیاب ہونگی۔

مزید : علاقائی


loading...