تحریک انصاف کا ایک اور یوٹرن،حجاب کے معاملے پرپنجاب اسمبلی میں قراداد جمع کرانے کے بعد واپس لے لی

تحریک انصاف کا ایک اور یوٹرن،حجاب کے معاملے پرپنجاب اسمبلی میں قراداد جمع ...

لاہور (خصوصی رپورٹ ) تحریک انصاف نے حجاب کے معاملہ پر یوٹرن لے لیا ، رکن پنجاب اسمبلی نبیلہ حاکم نے پہلے تعلیمی اداروں میں طالبات کیلئے حجاب لازمی پہننے کی قرار داد جمع کرائی پھر اضافی نمبروں کا لالچ نہ دینے کی قرارداد لے آئی۔ تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی نبیلہ حاکم علی نے حجاب کے معاملے پر پنجاب اسمبلی میں دو قراردادیں جمع کرا دیں۔ نبیلہ حاکم علی کی جانب سے جمع کرائی جانے والی پہلی قرارداد میں مطالبہ کیا کہ پنجاب کے تمام سرکاری اورپرائیویٹ تعلیمی اداروں میں طالبات کو حجاب پہننے کا پابند بنایا جائے اور حجاب پہننے والی بچیوں کو اضافی نمبرز دیئے جائیں۔ معاملہ میڈیا کے ذریعے قیادت کے نوٹس میں آیا تو تھوڑی دیر بعد نبیلہ حاکم نے پہلی قرار داد واپس لیکر دوسری قرار داد جمع کرا دی جس میں کہا گیا کہ پنجاب کے تعلیمی اداروں میں طالبات کو حجاب کا پابند نہ بنایا جائے اور حجاب کیلئے طالبات کو اضافی نمبروں کا لالچ نہ دیا جائے۔ نبیلہ حاکم علی کا کہنا ہے کہ پہلی قرارداد ان کے سٹاف کی غلطی کے باعث جمع ہوئی سٹاف نے ان کی ہدایت کو صحیح طرح نہیں سمجھا جس کا احساس ہوتے ہی انہوں نے تصحیح شدہ قرارداد جمع کرائی۔

مزید : علاقائی


loading...