سگیاں پل پر اور شاہدرہ ٹاؤن میں ڈاکوؤں کی لوٹ مار،مزاحمت پر 2راہگیر قتل

سگیاں پل پر اور شاہدرہ ٹاؤن میں ڈاکوؤں کی لوٹ مار،مزاحمت پر 2راہگیر قتل

لاہور(خبرنگار) صوبائی دارالحکومت میں ڈکیتی مزاحمت پر دو افراد کو قتل کر دیا گیا۔ پولیس نے دوران ڈکیتی مزاحمت پر قتل کے بجائے 302 کے تحت مقدمہ درج کر کے ٹال دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق شاہدرہ ٹاؤن کے علاقہ قیصر ٹاؤن کا رہائشی 50 سالہ شیخ مشتاق احمد صبح سویرے گھر سے پان کھانے نکلا۔ گھر کے قریب واقع دکان سے پان لے کر واپس آ رہا تھا کہ ریلوے پل غائب کے قریب ڈاکوؤں نے 30 ہزار روپے نقدی چھین لی اور مزاحمت پر فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا۔ راہ گیروں نے 15 پر اطلاع دی تو پولیس ایک گھنٹہ 15 منٹ تاخیر سے پہنچی جس پر شدید احتجاج کیاگیا۔ بتایا گیا ہے کہ مقتول سیاسی کارکن اور پراپرٹی ڈیلر تھا۔مقتول کے تین بیٹے اور دو بیٹیاں ہیں۔ مقتول کے چھوٹے بھائی ظفر علی ، ہم زلف ارسلان علی، رشتے دار وں اور محلہ داروں قاسم علی، ذوالقرنین ، مرزا محمود علی، سیف اللہ چٹھہ نے ’’پاکستان‘‘ کو بتایا کہ پل کے قریب دو ماہ کے دوران ڈکیتی کی تین وارداتیں ہو چکی ہیں۔ وزیر اعلیٰ نوٹس لیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ لگتا ہے یہ ڈکیتی قتل نہیں۔

مزید : علاقائی


loading...