پی ٹی آئی کے پاس پختونوں کے منڈیٹ کی کوئی قدرو قیمت نہیں:حیدر ہوتی

پی ٹی آئی کے پاس پختونوں کے منڈیٹ کی کوئی قدرو قیمت نہیں:حیدر ہوتی

بخشالی ( نمائندہ پاکستان)عمران خان اور نواز شریف کے درمیان جاری تنازعہ وزارت عظمیٰ کی کرسی کے لئے ہے ۔ عمران خان کے پاس پختونوں کی دی گئی مینڈیٹ کی کوئی قدر و قیمت نہیں ۔ پختونوں کو ووٹ کے بدلے صرف دھرنے ملے ۔ ان خیالات کا اظہار سابق وزیر اعلیٰ اور صوبائی صدر اے ۔ این ۔ پی امیر حیدر خان ہوتی نے سورے غر ساولڈھیر مین ایک بڑے شمولیتی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ جس میں جمیل خان اپنے خاندان اور ساتھیوں سمیت اے ۔ این ۔ پی میں شمولیت کا اعلان کیا ۔ اس موقع پر حاجی گل نواز خا ن مرکزی کونسل ممبر محمد انور خان ، محمد جمال باچہ پی کے 30 کے رہنما ہارون خان ، تحصیل کونسلر شوکت حمید خٹک ، اختر حمید اور دیگر پارٹی رہنما بھی موجود تھے ۔ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ میرے پختون بھائیوں کو اکثر دوسرے صوبوں کے سیاسی قیادت نے ورغلایا ہے ۔ جس کے نتیجے میں پختون دوسرے صوبوں کے دست نگر رہے ہیں اور انہیں ہمیشہ ترقی کی شاہراہ سے دور رکھا گیا ہے جبکہ اس بار بھی میرے صوبے کے پختون نے تبدیلی کے نام پر دھوکہ کھا کر اپنا قیمتی ووٹ بنی گالا کے نام کر دیا جس کی سزا وہ گزشتہ چار سال سے بھگت رہے ہیں انہوں نے کہا کہ میں انہیں ایک بار پھر متحد ہونے کی درخواست کرتا ہوں کیونکہ ہمیں صرف ایک بار حکومت کرنے کا موقع دیا گیا ۔جس میں اس صوبے نے گزشتہ 65 سال کے مقابلے میں کئی گنا زیادہ ترقی کی ۔ درجنوں بڑے تعلیمی ادارے ، ہسپتال اور شاہراہیں تعمیر کی گئی جبکہ موجودہ حکومت نے چار سال کے عرصے میں ہمارے جاری منصوبوں کو پایا تکمیل تک نہیں پہنچایا کیونکہ پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان کا مقصد صوبے کی عوام کے مینڈیٹ کا کوئی پاس رکھنا نہیں بلکہ اس کا مطمع نظر پنجاب پر حکمرانی کرنا اور وزارت عظمیٰ کی کرسی تک پہنچ جانا ہے صر خیبر پختونخواہ کے گنتی کے چند حلقے وہ خاطر میں نہیں لاتا کیونکہ اس صوبے کے مینڈیٹ کے ذریعے وہ وزیر اعظم نہیں بن سکتا لیکن عوامی نیشنل پارٹی پختون قوم کی اپنی پارٹی ہے اور ہمارا مقصد پختونوں کو پختونوں کی سرزمین پر آئین اور قانون کے دائرے میں رہ کر بااختیا بنانا ہے ۔ جہاں انہیں اپنے خوابوں کی تعبیر دلانا ہے ۔ آج کا پختون دنیا کی دیگر قوموں کی بنسبت زیادہ پر امن اور ترقی کا خواں خاں ہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...