پاکستانی نوجوان نے برطانیہ میں کامیابی کی نئی داستان رقم کردی

پاکستانی نوجوان نے برطانیہ میں کامیابی کی نئی داستان رقم کردی
پاکستانی نوجوان نے برطانیہ میں کامیابی کی نئی داستان رقم کردی

  


لندن(عرفان الحق) پاکستان کے نوجوان کل آبادی کا دو تہائی ہیں۔ جو معاشی، سیاسی اور سماجی ترقی کو یقینی بنانے میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔ منفرد اور باصلاحیت پاکستانی طلبہ و طالبات دنیا میں جہاں بھی گے انہوں نے اپنی محنت اور ذہانت سے اپنے ساتھ ساتھ وطن عزیز کا نام بھی روشن کیا۔ انہی نوجوانوں میں ایک نام مومن ثاقب ہے۔ پاکستان کے شہر لاہور سے تعلق رکھنے والا مومن ثاقب جو کہ تین سال قبل تعلیم کے حصول کےلیے لندن آیا ۔

کنگز کالج لندن میں زیر تعلیم مومن ثاقب کنگز کالج سٹوڈنس یونین کے پہلے ایشائی صدر منتخب ہو گے۔ مومن ثاقب نے مقابلے میں کھڑے آٹھ پہلوانوں کو مات دی ۔کنگز کالج کا شمار برطانیہ کے بہترین تعلیمی اداروں میں ہوتا ہے جہاں برطانیہ سمیت دیگر ممالک سے تیس ہزار طلباء و طالبات زیر تعلیم ہیں۔ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے مومن ثاقب کا کہنا تھا کہ وہ چاہتے تھے کہ سوشل سرگرمیوں میں حصہ لیں۔ مومن ثاقب کا کہنا تھا کہ گذشتہ سال انہوں نے بطور نائب صدر یونین کرسمس کی چھٹیوں میں جو سٹوڈنس گھروں میں نہیں جا سکتے تھے ان کے لئے یونیورسٹی کھلوائی اور انہیں فری کھانے کا اہتمام بھی کروایا۔ مومن ثاقب کا کہنا تھا کہ تیس ہزار میں سے چوبیس فیصد انٹرنینشل سٹوڈنس ہیں .

مومن ثاقب کا کہنا تھا کہ یوکے میں انڑنینشل سٹوڈنٹس کو بے پناہ مسائل درپیش ہوتے ہیں اور اب حکومت کی موجودہ پالسیوں نے سٹوڈنٹس کی مشکلات میں اور اضافہ کردیا ہے .ان کا کہنا تھا کہ ان کی کوشش ہو گئی کہ نینشل یونین آف سٹوڈنٹس کے ساتھ ملکر انٹرنینشل سٹوڈنٹس کے مسائل حل کروانے کی کوشش کریں .مومن ثاقب کا کہنا تھا کہ پاکستانی سٹوڈنٹس کو یوکے میں ہڑھائی کے ساتھ ساتھ سوشل سرگرمیوں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے .

مزید : برطانیہ


loading...