شنگھائی تعاون تنظیم کا مقامی کرنسیوں میں تجات کا اصولی فیصلہ، رکن ممالک سے تجاویز طلب

  شنگھائی تعاون تنظیم کا مقامی کرنسیوں میں تجات کا اصولی فیصلہ، رکن ممالک سے ...

  



اسلام آباد(خصوصی رپورٹ)چین، روس اور پاکستان سمیت شنگھائی تعاون تنظیم کے آٹھ رکن ممالک نے ڈالر اورپاؤنڈ کی بجائے مقامی وقومی کرنسیوں میں باہمی تجارت اور سرمایہ کاری اور بونڈ جاری کرنے کا اصولی فیصلہ کرلیا ہے۔18 مارچ کو ماسکو میں ہونے والے شنگھائی تعاون تنظیم کے وزارائے خزانہ کے اجلاس میں اس حوالے سے روڈ میپ طے کرکے دستخط کیے جائیں گے۔روس نے بطور چیئرمین شنگھائی تعاون تنظیم (ایس سی او) تمام رْکن ممالک سے مقامی کرنسیوں میں تجارت و سرمایہ کاری کے لیے تجاویز طلب کرلی ہیں۔ ان تجاویز کا ماسکو میں ہونے والے اجلاس میں تفصیلی جائزہ لینے کے بعد ایس سی او کے رْکن ممالک کے لئے قومی کرنسیوں کی میوچل سیٹلمنٹ کا نظام متعارف کروایا جائے گا۔رْکن ممالک کے درمیان قومی کرنسیوں میں تجارت و سرمایہ کاری کے لئے طے پانے والے روڈ میپ پر تمام رْکن ممالک دستخط کریں گے۔روس نے 18 مارچ کو ماسکو میں طلب کیے گئے شنگھائی تعاون تنظیم کے رْکن ممالک کے وزرائے خزانہ کے اجلاس کا ایجنڈا جاری کردیا ہے۔ماسکو میں ہونے والے شنگھائی تعاون تنظیم کی کانفرنس میں چین، بھارت، روس، پاکستان، کرغزستان، روس، تاجکستان، اور ازبکستان کے وزرائے خزانہ،وزارت خزانہ اور مرکزی بینکوں کے نمائندے شرکت کریں گے۔

مقامی کرنسی تبادل

مزید : صفحہ اول