وفاقی حکومت نے چینی آٹا کی طر ح کرونا کو بھی کمائی کا ذریعہ بنا لیا: پیپلز پارٹی

    وفاقی حکومت نے چینی آٹا کی طر ح کرونا کو بھی کمائی کا ذریعہ بنا لیا: پیپلز ...

  

اسلام آباد(آئی این پی)پیپلزپارٹی نے معاون خصوصی صحت کے مبینہ طور پر ماسک سمگل کرنے کے اقدام پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ وفاقی حکومت نے چینی آٹا کی طرح کرونا کو بھی کمائی کا ذریعہ بنا لیا ہے،وزیراعظم کے ناک کے نیچے 2 کروڑ ماسک سمگل ہوئے،وزیراعظم ٹوئٹر سے اور وزرا پریس کانفرنسوں سے باہر نہیں نکلتے، کرونا وائرس نے ہیجان برپا کر رکھا ہے اور حکمران ٹوئٹر پر بانسری بجا رہے ہیں،وفاقی حکومت کو سندھ حکومت سے سیکھنا چاہئے،وفاقی حکومت ایئرپورٹس پر کرونا کی چیکنگ کا کوئی کاؤنٹر تک نہیں بنا سکی، سندھ حکومت نے ایران سے آئے زائرین کے گھر گھر جاکر ٹیسٹ کئے۔اتوار کو اپنے ایک بیان میں مرکزی ترجمان پیپلز پارٹی سینیٹر مولابخش چانڈیو نے کہا کہ وفاقی حکومت نے دیگر بحرانوں کی طرح کرونا کو بھی کمائی کا ذریعہ بنا لیا ہے،وزیراعظم کے ناک کے نیچے 2 کروڑ ماسک سمگل ہوئے، عمران خان کی نااہل حکومت نے عوام کی زندگیاں داؤ پر لگا دی ہیں،ٹڈی دل حملہ کر کے ملک کھا گئے ہمارے نیرو حکمران سوائے رہے،اب کرونا وائرس نے ہیجان پربا کر رکھا ہے اور خان صاحب قوم کو فرماتے کہ گھبرانا نہیں میں خود نگرانی کر رہا ہوں،خان صاحب قوم اس وجہ سے ہی تو گھبرائی ہوئی ہے کہ آپ نگرانی کر رہے ہیں،کیونکہ آپ ہر بحران کی ذمہ داری تو قبول کرتے ہیں مگر ملزم سامنے نہیں لاتے۔ مولابخش چانڈیو نے کہا کہ بحرانوں کی ذمہ داری قبول کرنا کافی نہیں مجرموں کوکٹہرے میں لائیں۔جبکہ پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کی سیکریٹری اطلاعات ڈاکٹر نفیسہ شاہ نے کہا کہ سونامی قوم کو لوٹنے کے ایجنڈا پر گامزن ہے،وزیر آعظم کے مشیر نے فیس ماسک اسمگلنگ کرکے سنگین جرم کیا،قوم وائرس کے شدید خطرے میں ہے۔مشیر صحت نے فیس ماسک اسمگلنگ کردیئے،لوگ فیس ماسک کے حصول کیلئے پریشان ہیں، عمران خان کے وزیر صحت نے ادویات کی قیمتوں میں گردن توڑاضافہ کیا تھا، عوام دشمن حکومت سے خیر کی توقع نہیں۔

پیپلزپارٹی

مزید :

صفحہ آخر -