طلباء کی مثبت سرگرمیوں پر پابندی قابل مذمت ہے‘ تنویر ایڈوکیٹ

  طلباء کی مثبت سرگرمیوں پر پابندی قابل مذمت ہے‘ تنویر ایڈوکیٹ

  



صوابی (بیورورپورٹ)صوابی یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے سٹوڈنٹس کی مثبت سرگرمیوں پر پابندی کی مذمت کرتے ہیں۔ اس ضمن یونیورسٹی انتظامیہ کا جاری کردہ نوٹیفکیشن طلباء کو حقوق کے لئے آواز اٹھانے سے روکنے کی ناکام کوشش کی ہے۔ ان خیالات کااظہار صدر لاہور بار ایسو سی ایشن تنویر شہزاد ایڈوکیٹ نے طلباء کے وفد سے ملاقات کے دوران کیا۔ ایک جاری بیان میں تنویر شہزاد ایڈوکیٹ نے کہا کہ سٹوڈنٹس یونین انتظامیہ کے کالے کرتوت اور ظالمانہ پالیسی پر نہ صرف نظر رکھتے ہیں بلکہ طلباء میں شعور اجاگر کر کے مستقبل کے قائد فراہم کرتے ہیں۔ طلباء ملکر اگر مختلف سیمینارز، داخلہ کیمپ اور پروگرام منعقد کرتیں ہیں تو اس میں برائی ہی کیا ہے۔ انتظامیہ کی جانب سے ایسے غیر ضروری نوٹیفکیشن کی مثال جمہوریت کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسی کو اجازت نہیں دی جائے گی کہ طلباء کو حراساں کرے۔ انتظامیہ نوٹیفکیشن واپس لے وگرنہ ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر