الگ صوبوں کا قیام وقت کی اہم ضرورت‘ آصف رفیق رجوانہ

      الگ صوبوں کا قیام وقت کی اہم ضرورت‘ آصف رفیق رجوانہ

  



ملتان (نمائندہ خصوصی) مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں ملک آصف رفیق رجوانہ، عثمان خان بابرنے کہا ہے کہ موجودہ حکومت خطہ کے وسیع تر مفاد کے لئے قدم بڑھائے تو (ن) لیگ غیر مشروط طور پر ساتھ دینے کو تیار ہے حالانکہ (ن) لیگ کے دور حکومت میں دوصوبوں (بقیہ نمبر6صفحہ12پر)

بہاولپور اور جنوبی پنجاب کے قیام کے سلسلے میں قرار دادیں پنجاب اسمبلی میں منظور کی گئیں لیکن اسی دوران (ن) لیگ کی حکومت کے خلاف رکاوٹیں کھڑی کی گئیں جس کی وجہ سے ملتان میں سب سیکریٹریٹ نہ بن سکا جس کے لئے سابق سابق گورنر پنجاب ملک محمد رفیق رجوانہ، نے بھرپور کوشش کی ان خیالات کا اظہار انہوں نے لیگی رہنماعثمان خان بابر کی رہائش گاہ طارق روڈ پر منعقدہ پریس کانفرنس کے دوران کیا جس میں دیگر رہنماملک آیاز، رفیق کریمی، شہزاد وڑائچ، عدیل یوسف، الیاس، زنیر رجوانہ، وقاص اکبر، ملک اقبال تھہیم بھی موجود تھے ملک آصف رفیق رجوانہ نے مزید کہا کہ الگ صوبوں کا قیام وقت کی اہم ضرورت ہے اور اس سلسلے میں (ن) لیگ کے دور حکومت میں ملتان میں سیکریٹریٹ بھی بنانے کے لئے ایک کمیٹی بھی تشکیل دی گئی تاکہ سیکریٹریٹ میں ایڈیشنل چیف سیکریٹری سمیت محکمہ صحت، زراعت، تعلیم، آبپاشی کے علاوہ دیگر محکمہ جات کے اعلی افسران موجود ہوں جو اس خطہ کے عوام کے مسائل کے حل کو یقینی بنائیں اور انہیں معمولی معمولی مسائل کے سلسلے میں لاہور نہ جانا پڑے انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے اقتدار میں آکر 100دنوں میں الگ صوبہ بنانے کا اعلان کیا لیکن ڈیڑھ سال گزرنے کے باوجود الگ صوبہ کے قیام کے لئے عملی طور پر کوئی اقدامات نہیں کئے گئے اور آج صورتحال یہ ہے کہ موجودہ حکومت نے غریب عوام کو مہنگائی، بے روزگاری، یوٹیلیٹی بلز جیسے مسائل میں جکڑ کررکھ دیا ہے جس کی وجہ سے ملک بھر کی غریب بائیس کروڑ عوام شدید پریشانی سے دوچار ہے انہوں نے کہا کہ (ن) لیگ عوام کے مسائل کے حل کے سلسلے میں اپنی جدوجہد جاری رکھے گی۔

رفیق رجوانہ

مزید : ملتان صفحہ آخر