جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ‘ صوبے کیلئے ملتان زیادہ موزوں‘ ڈاکٹر منصور اکبر کنڈی

  جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ‘ صوبے کیلئے ملتان زیادہ موزوں‘ ڈاکٹر منصور اکبر ...

  



ملتان (سٹاف رپورٹر) بہاالدین زکریا یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر منصور اکبر کنڈی نے کہا ہے کہ جنوبی پنجاب سب سیکرٹریٹ قائم کرنے کا اعلان حکومت کا احسن فیصلہ ہے جس سے جنوبی پنجاب کے عوام کے لئے بڑی آسانیاں پیدا ہوں گی‘ اس کے لئے ملتان زیادہ موزوں ہے۔ روزنامہ پاکستان کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عوام کے مسائل حل کرنا اور ان کے لئے زیادہ (بقیہ نمبر7صفحہ12پر)

سے زیادہ آسانیاں پیدا کرنا حکومت کا اولین فرض ہے۔حکومت نے جنوبی پنجاب کے عوام کے حق میں بہترین فیصلہ کیا ہے جس کو سراہا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وطن عزیز پاکستان میں شروع سے ہی اگر زیادہ صوبے بنا لئے جاتے تواچھا ہوتاکیونکہ اس کے نقصان کم اور فائدے بہت زیادہ تھے۔اگر اس وقت مشرقی پاکستان کے 2صوبے ہوتے اورمغربی پاکستان کے 7صوبے ہوتے تو بہتر تھا لیکن ایسا نہیں کیا گیا‘ یہاں ون یونٹ اور سنٹرلائزیشن کو ترجیح دی گئی اور پھر یہاں مارشل لا کے ادوار رہے ہیں جن میں تمام پاورز و اختیارات وفاق کے پاس ہوتے ہیں۔اب جہاں یہ بات ہورہی ہے کہ ساؤتھ پنجاب الگ صوبہ بننا چاہئیے تو یہ بہت اچھی بات ہے کہ یہاں 2صوبے ہو جائیں اوریہ حقیقت ہے کہ جنوبی پنجاب بڑا صوبہ بن سکتا ہے‘ اس سے جہاں انتظامی معاملات میں بہت آسانیاں پیدا ہوں گی تو وہاں خطے کے عوام کو خاطر خواہ سہولیات میسر آئیں گی۔انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب سب سیکرٹریٹ بنانا حکومت کا اہم ترین فیصلہ ہے جو جنوبی پنجاب صوبے کی جانب اہم قدم ہے۔ہم اس کو عوامی سہولیات و فوائد کے طور پر دیکھتے ہیں۔جنوبی پنجاب سب سیکرٹریٹ کو با اختیار اور پاور فل بناناچاہئیے اور جنوبی پنجاب خطے پر مشتمل الگ صوبہ بنایاجانا چاہئیے جسے مکمل اختیارات حاصل ہوں‘اسے دیگر چھوٹے صوبے بھی سپورٹ کریں گے۔انہوں نے کہا کہ جمہوریت میں جب ڈی سنٹرلائزیشن کے لئے ترمیم کی گئی تو اس میں تو جنوبی پنجاب صوبے کی گنجائش بنتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سٹریٹجک اور جغرافیائی طور پرجنوبی پنجاب سب سیکرٹریٹ اور صوبے کے لئے ملتان زیادہ موزوں ہے‘ اگرچہ بہاولپور بھی زیادہ دور نہیں ہے اور اس کی اپنی ایک اہمیت ہے لیکن ملتان کی اپنی ایک تاریخ ہے‘تاریخی اور جغرافیائی بہت اہمیت ہے‘ یہاں سہولیات بھی زیادہ ہیں اوریہ لنک کرتا ہے اور یہاں سب سیکرٹریٹ بنانے اور صوبائی دارالحکومت بنانے کے زیادہ فوائد ہیں‘ اس لئے ملتان کا زیادہ حق ہے کہ یہاں سب سیکرٹریٹ بنایاجائے اور اسے صوبائی دارالحکومت بنایاجائے۔

ڈاکٹر منصور

مزید : ملتان صفحہ آخر