”میں اور کیا ثابت کروں؟“ محمد عامر بھی برس پڑے

”میں اور کیا ثابت کروں؟“ محمد عامر بھی برس پڑے
”میں اور کیا ثابت کروں؟“ محمد عامر بھی برس پڑے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز فاسٹ باﺅلر محمد عامر نے ناقدین کو بھرپور جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ میں اپنی اہلیت ثابت کرنے کیلئے کارکردگی دکھا رہا ہوں، اس کے علاوہ کیا ثابت کروں؟

تفصیلات کے مطابق نجی خبر رساں ادارے کو دئیے گئے انٹرویو میں محمد عامر کا کہنا تھا کہ ”مجھے کیاثابت کرنا ہے؟کارکردگی سب کچھ ثابت کر دیتی ہے۔ ایک پروفیشنل ہونے کے ناطے آپ کو جو بھی مواقع ملتے ہیں آپ ان کا فائدہ اٹھاتے ہیں۔ اس وقت میری توجہ صرف اور صرف پی ایس ایل پر اور میں اچھی کارکردگی دکھاتے ہوئے کرکٹ سے لطف اندوز ہونا چاہتا ہوں۔ ورلڈکپ بہت دور ہے، ابھی پانچ سے چھ مہینے پڑے ہیں، ابھی صرف اور صرف پی ایس ایل ہے۔“

حال ہی میں ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لینے والے محمد عامر کا کہنا تھا کہ ”ہر کسی کی رائے ہوتی ہے لیکن میں اپنے جسم کے بارے میں بہتر جانتا ہوں۔ میں سمجھتا ہوں کہ میری باڈی پر کام کا بوجھ زیادہ تھا جسے میں سنبھال نہیں پا رہا تھا اور اپنے کیرئیر کو طویل دینے کیلئے مجھے یہ فیصلہ لینا پڑا جس کی میری فیملی نے بھی تائید کی۔ ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کے بعد میں بہت بہتر محسوس کر رہا ہوں اور نتائج بھی سب کے سامنے ہیں۔“

ان کا کہنا تھا کہ ”ایک فاسٹ باﺅلر کے کیرئیر میں پانچ سال کا وقفہ بہت ہوتا ہے اور جب میں واپس آیا تو لگاتار تین سال تک تمام فارمیٹس میں کھیلا، تھکاوٹ ہوتی ہے اور خاص طور پر فاسٹ باﺅلرز کو اس مسئلے کا سامنا کرنا پڑا ہے لیکن اب میں بہت بہتر محسوس کر رہا ہوں۔“

مزید :

کھیل -PSL -PSL News Update -