سلیکٹڈ وزیراعظم نیب کی طرح الیکشن کمیشن کو بھی پر غمال، غلام بنانا چاہتے ہیں: مریم اورنگزیب 

  سلیکٹڈ وزیراعظم نیب کی طرح الیکشن کمیشن کو بھی پر غمال، غلام بنانا چاہتے ...

  

اسلام آباد(آئی این پی) مسلم لیگ (ن)کی ترجمان مریم اورنگزیب نے الیکشن کمیشن سے استعفیٰ کے حکومتی مطالبہ کو مضحکہ خیز، غیرآئینی،غیرقانونی اور آئینی ادارے کی توہین قرار دیدیا حکومت کی جانب سے الیکشن کمیشن کے استعفے کے مطالبے پر ردعمل دیتے ہوئے مسلم لیگ (ن)کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہاکہ سلیکٹڈ وزیراعظم نیب کی طرح الیکشن کمیشن کو بھی یرغمال اورغلام بنانا چاہتے ہیں  استعفیٰ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس نے ڈسکہ میں 20 پریزائیڈنگ افسران کو اغواء کیا،ووٹ چوری کیا،استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس نے سینٹ اجلاس میں نوٹوں کی منڈی لگائی اوراپنے اے ٹی ایمز کو جتوایا مریم اورنگزیب نے کہا کہ  استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس نے فارن فنڈنگ کیس میں چھ سال سے الیکشن کمیشن کو جواب نہیں دیااورمفرور ہے  استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس کے 23 غیرقانونی فارن فنڈنگ اکاونٹس سٹیٹ بنک نے پکڑے اور اب تک چھپائے ہوئے ہیں استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس پر 22کروڑ عوام عدم اعتماد کرچکے ہیں استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جو پارلیمان کا اعتماد کھو بیٹھا ہے انہوں نے مزید کہا کہ استعفیٰ وہ سلیکٹڈ وزیراعظم دے جس نے عوام کا آٹا، چینی، بجلی، گیس، دوائی چوری کی ہے استعفیٰ وہ سلیکٹڈ دے جو سپریم کورٹ میں ڈسکہ الیکشن کے زیرسماعت مقدمہ کے دوران الیکشن کمیشن کو ہراساں کرنے کی کوشش کررہا ہے۔

مریم اورنگزیب

مزید :

صفحہ آخر -