حکومت کا چیف اور اراکین الیکشن کمیشن کے استعفے کا مطالبہ بدنیتی،نیئر بخاری

 حکومت کا چیف اور اراکین الیکشن کمیشن کے استعفے کا مطالبہ بدنیتی،نیئر بخاری

  

اسلام آباد(آئی این پی) پاکستان پیپلزپارٹی نے حکومت کی طرف سے چیف الیکشن کمشنر اور اراکین الیکشن کمیشن کے استعفے کے مطالبے کو بدنیتی اور انتقام پر مبنی قرار دیا ہے۔ پاکستان پیپلز پارٹی کے سیکرٹری جنرل سید نیر حسین بخاری نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ وفاقی حکومت کی طرف سے ایسے مطالبے کی شدید مذمت کرتے ہیں، حکومت کا چیف الیکشن کمشنر اور اراکین سے مستعفی ہونے کا مطالبہ مضحکہ خیز اور سمجھ سے بالاتر ہے۔ واضح ہوگیا ہے کہ سلیکٹڈ حکومت ادارے بھی سلیکٹڈ چاہتی ہے۔ پیپلزپارٹی آئینی اور قانونی فیصلوں میں الیکشن کمیشن کے ساتھ کھڑی ہے۔دریں اثناء پاکستان پیپلز پارٹی کی رہنما سینیٹر پلوشہ خان نے کہا ہے کہ سینیٹ میں ووٹ پر ڈاکہ مارنا سینیٹ کے وقار پر حملہ ہے، عمران نیازی قومی اسمبلی کے بعد سینیٹ کو بھی ربڑ سٹمپ بنانا چاہتے ہیں اس لئے انہوں نے اپنے اتحادی کی مدد سے رولنگ پر چیئرمین سینیٹ بنایا ہے، اپنے ایک بیان میں  پلوشہ خان نے کہا کہ تمام جمہوریت پسندوں کو عمران نیازی کے شر سے آئین اور جمہوریت کو بچانا ہوگا، آصف علی زرداری نے اٹھارہویں آئینی ترمیم کے ذریعے وفاق سے صوبوں کے شکوے ختم کئے تھے، یہ کہنا درست ہوگا کہ اٹھارہویں آئینی ترمیم وفاق اور اکائیوں کے درمیان ایک میثاق ہے، سینیٹر پلوشہ خان نے کہا کہ سینیٹ میں ووٹ چوروں کو من مانی کرنے نہیں دیں گے، کٹھ پتلی اور ووٹ چور حکومت کیخلاف سینیٹ میں سخت مزاحمت کریں گے۔

پیپلز پارٹی

مزید :

صفحہ آخر -