چین صحرائی ٹڈیوں کے خطرہ سے نمٹنے کیلئے پاکستان کی مدد کیلئے تیار ہے: پروفیسر چانگ لانگ 

چین صحرائی ٹڈیوں کے خطرہ سے نمٹنے کیلئے پاکستان کی مدد کیلئے تیار ہے: پروفیسر ...

  

 بیجنگ(آئی این پی) چینی پروفیسر چانگ لانگ نے کہا ہے کہ چین اور پاکستان آہنی بھائی ہیں، چین صحرا  ئی ٹڈیوں کے خطرے سے نمٹنے میں پاکستان کی مدد کرنا چاہتا ہے، پنجاب کو اب سب سے زیادہ ابتر صورتحال کا سامنا ہے، اگلے دو ہفتوں میں ٹڈی دل کے بچے نکلنا شروع ہو جائیں گے۔ چائنہ اکنامک  نیٹ کی رپورٹ کے مطابق چینی وزارت زراعت اور دیہی امور کے وزیر تانگ رینجیان اور پاکستانی و زیربرائے قومی فوڈ سکیورٹی اینڈ ریسرچ سید فخر امام نے ٹڈیوں کے کنٹرول کے تربیتی پرو گرام کے آ غاز کے حوالے سے اپنے ویڈیو خطاب کیساتھ مبارکباد بھی دی۔ سیمینار میں چائنا ایگریکلچر یونیورسٹی کے پروفیسر چانگ لانگ نے کہا کہ چین اور پاکستان آہنی بھائی ہیں، اور چین صحرا  ئی ٹڈیوں کے خطرے سے نمٹنے کیلئے پاکستان کی مدد کرنا چاہتا ہے۔ چانگ ان ماہرینکی اس ٹیم میں سے ایک ممبر ہے جنہوں نے فروری2020 میں صحرائی ٹڈیوں کے کنٹرول میں مدد کیلئے پاکستان کا سفر کیا۔ جب چانگ نے دوسرے ماہرین کے ہمراہ پورے پاکستان میں ایک فیلڈ ٹرپ کیا تو انہوں نے مختلف حالات کے مطابق صحر ئی ٹڈیوں پر قابو پانے کیلئے مختلف تجاویز پیش کیں۔ لہذا فوری طور پر انڈوں کو تلاش کر کے تلف کرنے اور کیمیائی سپرے سمیت  مختلف اقدامات ضروری ہیں۔ مخصوص اقدامات کے علاوہ چانگ نے پاکستانیوں کو صحر ئی ٹڈیوں پر قابو پانے کیلئے ایک پائیدار، اعلی موثر اور طویل مدتی انتظامی نظام قائم کرنے کا مشورہ بھی دیا۔

پروفیسر چانگ لانگ

مزید :

صفحہ آخر -