گرانفروشوں کیخلاف کارروائیاں‘ مزید 23 افراد گرفتار 

گرانفروشوں کیخلاف کارروائیاں‘ مزید 23 افراد گرفتار 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) محکمہ خوراک نے گرانفروشوں کیخلاف کارروائیاں کرتے ہوئے 23 افراد کو گرفتار کرلیا۔ وزیراعلیٰ کے مشیر برائے خوراک میاں خلیق الرحمان اور سیکرٹری محکمہ خوراک خوشحال خان کی ہدایت پر راشننگ کنٹرولر پشاور آفتاب عمر کی نگرانی میں اسسٹنٹ فوڈ کنٹرولر تسبیح اللہ نے ناصر باغ اور یونیورسٹی ٹاؤن میں فوڈ پوائنٹس میں اشیائے خوردونوش کے معیار کو چیک کیا اور نرخوں سے متعلق آگاہی حاصل کی جبکہ عام شہری کے روپ میں خریداری بھی کی۔ یونیورسٹی ٹاؤن میں امرود کو 120 روپے کے بجائے 250 روپے میں فروخت کرنے پر چار پھل فروشوں کو گرفتار کرلیا جبکہ ناصر باغ میں سرکاری نرخنامے سے تجاوز کرنے پر 19 افراد کو گرفتار کر کے ان کے خلاف متعلقہ تھانوں میں مراسلے جمع کردیئے۔ گرانفروشوں میں سبزی وپھل فروش‘ دودھ و دہی فروش‘ نانبائی‘ قصائی‘ بیکری و جنرل سٹور مالکان اور دیگر شامل ہیں۔ راشننگ کنٹرولر پشاور آفتاب عمر نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ فوڈ پوائنٹس مالکان شہریوں کو معیاری و مقررہ نرخوں پر اشیائے خوردونوش فراہم کریں جبکہ دکانوں میں نمایاں جگہوں پر نرخنامے آویزاں کرنے سمیت اس پر عملدرآمد کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ گرانفروشی کسی صورت قبول نہیں ہے جبکہ مرتکب افراد کے خلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی عمل میں لائی جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ گرانفروشوں کے لئے پشاور میں جگہ نہیں وہ اپنا قبلہ درست کریں بصورت دیگر ان کے دکانوں کو سیل کیا جائیگا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -