سرکاری ملازمین کا مطالبات منظوری کیلئے شہر شہر احتجاج‘ کام بند 

سرکاری ملازمین کا مطالبات منظوری کیلئے شہر شہر احتجاج‘ کام بند 

  

وہاڑی‘ مظفر گڑھ‘ جام پور (بیورو رپورٹ‘ نامہ نگار) سرکاری ملازمین کی تنخواہیں نہ بڑھانے پر وہاڑی کے ملازمین نے شدید غم و غصہ کا اظہار کیا ہے (ایپکا)کے زیر اہتمام ملازمین نے ڈی سی کمپلیکس میں احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین کی قیادت صوبائی نائب صدر امان اللہ منہیس،ضلعی صدر منور علی بھٹی،نائب صدررانا اسرار احمد نے کی جبکہ مظاہرہ میں اسحاق گجر،رانا (بقیہ نمبر43صفحہ 6پر)

اکمل،فیض الحسن،مہر امجد سیال،اکبر ساقی،نوید قریشی،آصف گھمن،عابد گھمن،جاوید ٹی ایم اے،رانا ایوب،چوہدری عامر جٹ سمیت ملازمین کی کثیر تعداد شریک ہوئی مظاہرین نے ڈپٹی کمشنر آفس میں دھرنا دیئے رکھا مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مقررین امان اللہ منہیس،منور علی بھٹی،رانا اسرار و دیگر نے کہا کہ حکومت پنجاب کے ملازمین کے ساتھ سوتیلی ماوں جیسا سلوک کررہی ہے10فروری احتجاج پر وفاق نے تمام ملازمین کی تنخواہوں میں 25فیصد اضافہ کا وعدہ کیا مگر سوائے وفاق کے ملازمین کے دیگر ملازمین کی تنخواہیں نہیں بڑھائی گئیں تمام ملازمین کے ساتھ یکساں سلوک روا رکھا جائے ہمارے چارٹر آف ڈیمانڈ کے مطابق مطالبات تسلیم کئے جائیں اگر مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو25مارچ کو پنجاب بھر کے ملازمین احتجاج کریں گے۔ بڑھتی ہوئی مہنگای کے پیش نظرتنخواہوں میں وفاقی حکومت کے اعلان کیمطابق پنجاب حکومت کی جانب سے %25اضافہ نہ کرنے کے خلاف 18مارچ کوچوک کچہری اور24 مارچ کولاہور سیکریٹریٹ پرسرکاری ملازمین کی جانب سیدھرنادیاجاے گا جس میں اساتذہ کی بہت بڑی تعدادشرکت کرے گی ان خیالات کااظہارامام دین ملک ضلعی صدرپنجاب ٹیچرزیونین، ذوالفقارعلی ندیم ایڈیشنل صوبای پریس سیکرٹری پنجاب،جمشیداختربابر،عبدالغفارکاکڑ،شہزادخان شیروانی نے کیااس موقع پرسہیل قادر، عبدالستارچانڈیہ،شکیل احمد، چوہدری کاظم رضا، محمدرفیق کیمسٹ وضلع بھرسے آے ہوے اساتذہ موجودتھے۔انہوں نے کہا کہ حکومت پنجاب نے تاحال 25%تنخواھوں میں اضافہ کانوٹیفیکشن جاری نہیں کیا جس کی وجہ سے18 مارچ کو 11 بجے مظفرگڑھ اور 24 مارچ کو 2 بجے وزیراعلی پنجاب ھاس لاھور کیسامنیاحتجاج ھو گالہذا احتجاج میں بھرپورشرکت کی جاے گی۔انہوں نے کہا کہ حکومت مہنگای پرقابوپانے میں ناکام ہوچکی ہے جبکہ ملازمین کی تنخواہوں میں مہنگای کے تناسب سے اضافہ کرناحکومت کی ذمہ داری ہے وفاقی حکومت نے اضافہ کااعلان کردیاہے جبکہ پنجاب حکومت لیت ولعل سیکام لیرہی ہے جس کیباعث ملازمین میں حکومت کیخلاف بیاعتباری اوربیچینی پای جارہی ہے جس کی پنجاب حکومت خودذمہ دارہوگی۔ مرکزی قیادت کے حکم پر ایپکاء راجن پور کے صدر محمد اسلم چانڈیہ کی قیادت میں تمام محکموں کے عہدیدران نے ڈی سی افس کے کمپلیکس میں دھرنا دیاا ور حکومت کی پالیسوں پر شدید نقطہ چینی کی۔ احتجاجی دھرنے سے صدر محمد اسلم چانڈیہ ودیگر مقررین نے کہا کہ حکومت ملازمین کا معاشی قتل بند کرئے۔ ملازمین کی تنخواوں میں پچیس فی صد اضافہ کا فوری طور پر نوٹی فیکشن جاری کیا جائے۔ورنہ احتجاج کا داہرہ کار وسیع کرتے ہوئے صوبائی سطح پر بڑھا دیں گے۔ علاوہ ازیں ڈپٹی کمشنر راجن پور احمر نیک خان کو یاداشت بھی پیش کی گئی۔

کام بند

مزید :

ملتان صفحہ آخر -