فیصل واوڈا کی نشست پر نثارکھوڑو کا نوٹیفکیشن معطل کرنے کی استدعا مسترد

فیصل واوڈا کی نشست پر نثارکھوڑو کا نوٹیفکیشن معطل کرنے کی استدعا مسترد

  

اسلام آباد(آئی این پی) سپریم کورٹ نے فیصل واوڈا کی نشست پر نثارکھوڑو کا نوٹیفکیشن معطل کرنے کی استدعا مسترد کردی۔ سپریم کورٹ میں چیف جسٹس پاکستان جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے پی ٹی آئی رہنما فیصل واوڈا کے نااہلی کے کیس کی سماعت کی۔ دورانِ  سماعت الیکشن کمیشن کے وکیل نے کہا کہ فیصل واوڈا کی خالی نشست پر9 مارچ کو الیکشن ہوا، ان کی نشست پر جیتنے والے امیدوارکا نوٹیفکیشن ابھی جاری نہیں ہوا، کیس کا نوٹس کل موصول ہوا، جواب جمع کرانے کے لیے وقت درکار ہے۔ اس موقع پر فیصل واوڈا کے وکیل نے کہا کہ واوڈا کی جگہ جیتنے والے امیدوار کا نوٹیفکیشن معطل کیا جائے، سپریم کورٹ کے حکم امتناع کی وجہ سے معاملات زیر التوا ہیں۔ فیصل واوڈا کے وکیل کے موقف پر چیف جسٹس نے ریمارکس  دیے کہ عدالت نے کسی نوٹیفکیشن کو نہیں روکا،  فیصل واوڈا کی خالی نشست پر امیدوارکی جیت عارضی ہے، اگر فیصل واوڈا کیس ہارجاتے ہیں تو جیتنے والے امیدوارکی لاٹری نکل جائے گی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ غلط بیان حلفی اور اس کے بعد آپ کے کنڈکٹ کے نتائج تو ہوں گے۔

فیصل واوڈا 

مزید :

صفحہ آخر -