ملکی تعمیر وترقی میں خواتین کا اہم کردار،ڈاکٹرعظمی قریشی 

ملکی تعمیر وترقی میں خواتین کا اہم کردار،ڈاکٹرعظمی قریشی 

  

ملتان (وقا ئع  نگار)ویمن یونیورسٹی میں پیغام پاکستان کے سلسلہ میں ایک روزہ سیمینار ڈائریکٹر سٹوڈنٹس افیر کے زیرِ اہتمام منعقد کیاگیا جس میں انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی کااشتراک شامل تھا سیمینار کی مہمان خصوصی ویمن یونیورسٹی کی وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عظمی قریشی اور ڈاکٹر ضیا الحق تھے اس موقع پر ڈاکٹر عظمی قریشی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ویمن  یونیورسٹی روز اول سے ہی تعمیر کردار، تشکیل معاشرہ اور  فروغ تعلیمات اسلامی کی ترویج کے لیے مصروف عمل ہے، نوجوان  مرد وخواتین ہی وہ قوت ہیں جن سے امت کی امیدیں جڑی ہیں،  پاکستانی خواتین کی صلاحیتیں قابل تعریف ہیں، ملک کا مستقبل انہی کے  ہاتھ میں ہے جو اساتذہ کی (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

قیادت میں پیغام پاکستان جیسے  منصوبوں کے ذریعے اپنا کرادر ادا کریں، ڈاکٹر ضیا الحق نے کہا کہ نوجوان انتہا پسندی، دہشت گردی اور  فرقہ واریت کی بیخ کنی کا حصہ بن کر پیغام پاکستان کی روشنی میں اعتدال صبر اور انسانیت سے محبت کا درس دیں نوجوانان پاکستان کے بغیر  ملکی ترقی کا خواب  پورا نہیں ہو سکتا،ہمیں بقاے باہمی کے رویے کو پروان چڑھانا ہے انہوں نے کہا کہ نوجوانان پاکستان کا بیانیہ 50  ہزار طلبا و طالبات کی محنت اور شرکت سے بنایا گیا  یہ سیمینار بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے، اس سیمینار کا  مقصد نوجوان نسل خصوصا طالبات کو ان اقدامات سے  آگاہ کرنا ہے جس کے ذریعے تمام مسالک کے علما ومشائخ نے ہشتگردانہ اور انتہا پسندانہ سوچ کو کچل کر رکھ دیا تھا۔ ماضی میں جب چند شرپسند عناصر نے ریاست کو غیر اسلامی قرار دیکرریاست اور اس کے اداروں کیخلاف اعلان جنگ کر دیا تو تمام مسالک کے علما ومشائخ نے متحد ہو کر اس بیانیہ کو مسترد کر کے اپنا ایک متفقہ فتوی جاری کیا جس میں دہشتگردی اور انتہاپسندی کی نفی کی گئی۔آئین پاکستان کے مطابق پاکستان ایک اسلامی ریاست ہے جہاں کوئی قانون قرآن وسنت کے متصادم نہیں ہو سکتا ہے۔ وہ دن دور نہیں جب یہ پورا خطہ سبز ہلالی پرچم کے سائے تلے آگے بڑھے گا۔ ففتھ جنریشن وار کے اس دور میں ہمارے دشمن قوم اور فوج میں دوریاں پیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں لیکن وہ اپنے مذموم عزائم میں ناکام ہوں گے۔پیغام پاکستان  ایک فکری تحریر وتقریر ہے۔ پیغام پاکستان  ایک قومی بیانیہ اور تاریخی دستاویز ہے۔ اس دستاویز کے ذریعے تمام مسالک کے علما ومشائخ نے دہشتگردی اور انتہا پسندی کیخلاف اپنے عزم صمیم کیا اظہار کیا۔ اس قومی بیانیہ کو فروغ دینے کی ضرورت ہے، سیمینار میں ڈاکٹر عدیلہ سعد اور تمام شعبوں کی چیئرپرسن نے شرکت کی ۔

سیمینار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -