فواد حسن فواد کیخلاف اثاثہ جات کیس کی سماعت 5اپریل تک ملتوی

فواد حسن فواد کیخلاف اثاثہ جات کیس کی سماعت 5اپریل تک ملتوی

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج عزیز اللہ کلونے سابق وزیراعظم نواز شریف کے پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد کیخلاف آمدنی سے زائد اثاثہ جات کیس کی سماعت 5اپریل تک ملتوی کردی  فواد حسن فواد احتساب عدالت کے روبرو پیش ہوئے  دوران سماعت بینک الفلاح کے وائس پریزیڈنٹ خواجہ اویس پرویز سمیت تین گواہان نے بیانات قلمبند کرائے،فواد حسن فواد نے وکیل امجد پرویز نے گواہان سے جرح مکمل کی گواہ نے کہا کہ فواد حسن فواد کی فیملی کی کمپنی سرنٹ سروسز راولپنڈی لمیٹڈ تمام پراپرٹی کی مالک ہے،بینک افسران نے کمپنی کے اکاؤنٹس کا ریکارڈ پیش کیا گیا گواہ نے مزید کہا کہ اس کمپنی کے اکاؤنٹ کیساتھ فواد حسن فواد کا کوئی تعلق نہیں راولپنڈی میں فواد حسن فواد فیملی کا پلازہ بھی کمپنی کی ملکیت ہے،نیب نے فواد حسن فواد کیخلاف غیر قانونی اثاثہ جات کا ریفرنس دائر کر رکھا ہے، نیب کے ریفرنس کے مطابق فواد حسن فواد پر 4 ارب 56 کروڑ 51 لاکھ 26 ہزار 904 روپے غیر قانونی طور پر اثاثہ جات بنانے کا الزام عائد کیا گیا ،فواد حسن فواد نیب کے روبرو 3 ارب 47 کروڑ 54،لاکھ 80 ہزار 822 روپے کی وضاحت دے سکے ہیں،فواد حسن فواد ایک ارب اور  8 کروڑ رقم کا حساب نہیں دے سکا۔

مزید :

علاقائی -