وفاقی وزیر آبی وسائل مونس الٰہی کی زیرصدارت داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی سٹیئرنگ کمیٹی کا 18واں اجلاس

وفاقی وزیر آبی وسائل مونس الٰہی کی زیرصدارت داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی ...
وفاقی وزیر آبی وسائل مونس الٰہی کی زیرصدارت داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی سٹیئرنگ کمیٹی کا 18واں اجلاس

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر برائے آبی وسائل مونس الٰہی نےداسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی سٹیئرنگ کمیٹی کے 18ویں اجلاس کی صدارت کی۔ اجلاس میں تین ایجنڈا آئٹمز پر تبادلہ خیال کیا گیا جن میں انہانسڈ سیلف مینیجڈ ریلوکیشن (ای ایس ایم آر) پیکیج کے تحت متاثرین کو ادائیگی کے طریقہ کار پر کے پی حکومت کی تجویز کی منظوری، پتن سے داسو تک 132 کے وی ٹرانسمیشن لائن کی تعمیرکیلئے دائیں راستے کے مسئلے کے حل کی پیشرفت کا جائزہ، لوکل ایریا ڈویلپمنٹ پروگرام کی پیشرفت کا جائزہ شامل تھے۔

مونس الٰہی نے غور و خوض کے بعد کے پی  حکومت کی تجویز کی منظوری دی جس میں ای ایس ایم آر  پیکیج کے تحت متاثرین کو ادائیگیوں کا طریقہ کار شامل ہے۔ انہوں نے یہ بھی ہدایت کی کہ ضلعی انتظامیہ، اپر کوہستان 30 جون 2022 تک 1000 متاثرین کو ادائیگیوں کے حوالے سے نازک معاملات کو مکمل کرے گی، ادائیگی کے بعد زمین کا قبضہ فوری طور پر واپڈا کے حوالے کر دیا جائے گا۔ 

وزیر برائے آبی وسائل نے  پیڈو (PEDO) کو ہدایت کی کہ وہ پتن کے مقامی لوگوں کو بجلی کی ضرورت کا پتہ لگانے کیلئے دو ہفتوں کے اندر سرگرمیوں کے تفصیلی پلان، عارضی ٹائم لائنز اور تخمینہ لاگت پر مشتمل اپنی رپورٹ واپڈا کو پیش کرے تاکہ زیریں کوہستان کے علاقے میں اعتماد سازی کے اقدام کے طور پر ضروری اقدامات کیے جا سکیں جس سے داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی تعمیر کیلئے بجلی کی فراہمی کیلئے پتن سے داسو تک 132 کے وی ٹرانسمیشن لائن کی تعمیر کی راہ ہموار ہو گی۔مونس الٰہی کی ہدایت کے مطابق ایڈیشنل سیکرٹری، محکمہ توانائی، کے پی نے پیڈو کی طرف سے رپورٹ دو ہفتے کے اندر واپڈا کو جمع کرانے کا وعدہ کیا۔

چیئرمین واپڈا نے خیبرپختونخوا حکومت کی جانب سے مقامی لوگوں کو بجلی کی فراہمی کے اخراجات واپڈا کی جانب سے اپنے ذرائع سے فراہم کیے جانے والے پراجیکٹ کے مالیات سے پورا کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ مونس الٰہی نے کمشنر ہزارہ ڈویژن کو ہدایت کی کہ وہ ماہ رمضان کے آغاز سے قبل پتن اور کوہستان لوئر کے مقامی لوگوں کے ساتھ جرگہ کریں تاکہ 132 کے وی ٹرانسمیشن لائن پر تعمیر کا کام بغیر کسی تاخیر کے شروع کیا جا سکے۔

مزید :

قومی -