حکو مت کے اقتدار میں آنے سے تاجربرادری کو کوئی ریلیف نہیں ملا، نعیم میر

حکو مت کے اقتدار میں آنے سے تاجربرادری کو کوئی ریلیف نہیں ملا، نعیم میر

لاہور ( وقائع نگار )آل پاکستان انجمن تاجران کے مرکزی جنرل سیکرٹری نعیم میر نے کہاہے کہ مو جودہ حکو مت کے اقتدار میں آنے کے باوجو د تاجربرادری کو کسی قسم کاریلیف میسر نہ ہوا ہے جبکہ ٹیکسوں کی شر ح سمیت مسائل میں اضافہ کاروبار پر منفی اثرات مر تب کر رہا ہے۔وفاقی حکو مت اپنے وعدوں کی پاسداری کر تے ہوئے آئندہ مالی سال کابجٹ ٹیکس فری اور بزنس فرینڈلی پیش کرے اوران ڈائریکٹ ٹیکس کی بجائے ڈائریکٹ ٹیکس کو پرموٹ کریان خیالات کا اظہار انھوں نے گزشتہ روز جاری اپنے بیان میں کیا ۔ نعیم میر نے کہا کہ حکو متی ناقص معاشی پالیسیو ں کی بدولت غریب سے غریب آدمی بھی ان ڈائر یکٹ ٹیکس دے رہا ہے کرپشن کے باعث قومی خزانے میں یہ ٹیکس بہت کم پہنچتا ہے   جبکہ ٹیکس نیٹ میں اضافے کے حوالے سے ایف بی آر کی کارکردگی تسلی بخش نہیں ۔ اس حوالے سے بنائے گئے منصوبے صرف کاغذوں تک محدود رہے ہیں ۔ وفاقی حکومت آئندہ مالی سال کے بجٹ میں سیلز ٹیکس کو سنگل ڈیجٹ پر لایا جائے اور امپورٹ کسٹم ڈیوٹی میں نمایاں کمی کی جائے تاکہ سمگلنگ رُکے اور قومی خزانے میں پیسہ آئے

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...