عمران خان عوام کو بیوقوف نہیں بنا سکتے، الیکشن 2018ء میں ہونگے،زعیم قادری

عمران خان عوام کو بیوقوف نہیں بنا سکتے، الیکشن 2018ء میں ہونگے،زعیم قادری

 لاہور(پ ر)پنجاب حکومت کے ترجمان سید زعیم حسین قادری نے کہا ہے کہ عمران خان دھرنوں کے بعد عوام کو اب مزید بیوقوف نہیں بنا سکتے۔ کنٹینر سے دھاندلی کا ڈھول پیٹنے والوں کو مایوسی ہوئی۔ ان کے پاس کسی قسم کے کوئی ثبوت نہیں۔ عمران احمقوں کی جنگ میں بستے ہیں۔ الیکشن 2018ء میں ہی ہوں گے۔ زعیم حسین قادری نے کہا کہ تبدیلی کے دعویدار اب منہ چھپاتے پھرتے ہیں۔ عوام انہیں مسترد کر چکے ہیں۔ وہ دوسروں کو بہتان لگانے سے پہلے عوام کو ضرور بتائیں کہ انہوں نے کے پی کے میں دودھ اور شہد کی کونسی نہریں بہا دی ہیں؟ اسی طرح یہ بھی بتائیں کہ دوسروں کو آئین اور ضابطوں کا درس دینے والے خود کیسے انتخابی مہم میں حصہ لے کر ضمنی الیکشن میں شامل ہو رہے ہیں؟ زعیم حسین قادری نے کہا کہ پنجاب میں توانائی کے منصوبے شروع کر کے وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے مخالفین کے منہ بند کر دیئے ہیں اور عمران خان کی اس حوالے سے تنقید کھسانی بلی کے کھمبا نوچنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کو یاد رکھنا چاہیے کہ میٹروبس سے روزانہ 2لاکھ افراد سفر کی معیاری سہولتیں حاصل کرتے ہیں اور انشاء اللہ یہ عمل راولپنڈی کے بعد ملتان اور دیگر شہروں میں بھی جاری رہے گا۔ سیدزعیم حسین قادری نے دانش سکولوں پر عمران خان کی تنقید کو مضحکہ خیزقرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ غریب اور لائق بچوں کوتعلیم حاصل کرنے سے نہیں روک سکتے۔ اوئے اوئے اور شرم کرو کے نعرے عمران خان کی بیمار ذہنیت کے عکاس ہیں اور درحقیقت پی ٹی آئی کے سربراہ کی تقریر ان کے ذہنی دیوالیہ پن کو ظاہر کرنے کے لئے کافی ہے۔ عمران خان کی سیاست کا محور صرف اور صرف دوسروں پر الزام تراشی کرنا ہے۔ وہ قومی اداروں‘ سیاستدانوں اور کسی پر بھی بغیر تصدیق کئے الزام عائد کر کے اپنی کامیابی سمجھتے ہیں۔ بہتر ہوتا کہ وہ پہلے حقائق جان لیں تاکہ انہیں بعد میں یوٹرن نہ لینا پڑے۔ زعیم حسین قادری نے کہا کہ دوسروں کو آئین اور ضابطوں کی پاسداری کا درس دینے والے خود ضمنی الیکشن کی مہم میں کیونکر حصہ لے سکتے ہیں؟ زعیم قادری

مزید : صفحہ آخر


loading...