نئی دہلی،انوکھی92سالہ بڑھیا جو 80سال سے ریت کھا رہی ہے

نئی دہلی،انوکھی92سالہ بڑھیا جو 80سال سے ریت کھا رہی ہے
 نئی دہلی،انوکھی92سالہ بڑھیا جو 80سال سے ریت کھا رہی ہے

  


 نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) آپ ایک ہی کھانا مسلسل کتنے دن تک کھا سکتے ہیں اگرچہ وہ انتہائی مزیدار ہی کیوں نہ ہو؟لیکن اگر بات ہو ’’ریت‘‘ کھانے کی، تو کتنے عرصے تک کھانے کی بات تو دور، کھانے کے خیال ہی سے جی متلانے لگے گا۔ لیکن آپ سن کر حیران ہوں گے کہ بھارت میں ایک خاتون ایسی ہے جو مسلسل 80سال سے روزانہ 1کلوگرام ریت کھا رہی ہے اور آج بھی اس کی صحت قابل رشک ہے۔ 92سالہ سداما دیوی کا کہنا ہے کہ اس نے پہلی بار اپنی سہیلیوں سے شرط لگا کر ریت کھائی تھی، اس وقت اس کی عمر محض10سال تھی۔ اس کے بعد وہ ریت کھانے کی عادی ہو گئی اور آج تک کھاتی آ رہی ہے۔ سداما دیوی 10بچوں کی ماں اوربھارت کے علاقے قصبے کیجری نور پور کی رہائشی ہے۔ سداما دیوی کہتی ہیں کہ میں نے اپنی شادی کی دعوت ولیمہ میں صرف ریت کھائی تھی،ریت کھانے کی وجہ سے مجھے کبھی بھوک محسوس نہیں ہوئی اور نہ ہی میں آج تک بیمار نہیں ہوئی۔ہماری مالی حالت بہتر نہیں لیکن میں نے کھانے کے لیے ایسی چیز ڈھونڈلی ہے جو مجھے کبھی بھی اور کہیں بھی مل سکتی ہے۔ میرے 7بیٹے اور 3بیٹیاں تھیں، ان میں سے اب 4بیٹے اور 2بیٹیاں انتقال کر چکے ہیں۔ میری اولاد میں سے کوئی بھی ریت نہیں کھاتا تھا۔ شادی سے پہلے میرے والد اور بھائی میرے لیے ریت لاتے تھے اور شادی کے بعد میرے شوہر کرشن کمار لاتے ہیں۔جب میں پہلی بار بیاہ کر اس گھر میں آئی تھی تو یہاں ہر کوئی حیران تھا کہ دلہن ریت کھاتی ہے۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ حیران کن طور پر سداما دیوی کو کوئی خطرناک بیماری نہیں ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...