صافاور شفافانتخابات ہی جمہوریت کی بنیادی روح ہیں،عبدالعلیم خان

صافاور شفافانتخابات ہی جمہوریت کی بنیادی روح ہیں،عبدالعلیم خان

 لاہور (نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف لاہور کے صدر عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ صاف اور شفاف انتخابات ہی جمہوریت کی بنیاد ی روح ہے، جبکہ جعلی جمہوریت تو ڈکٹیٹرشپ سے بھی بدتر ہے، شام 6سے 10بجے تک راتوں رات عوامی فیصلے کی تبدیلی کو جمہوریت نہیں کہا جاسکتا اور نہ ہی اس سے عوامی مسائل حل ہوسکتے ہیں، یہ ایک حقیقت ہے کہ اگر موجودہ حکومت نے 10فیصد مسائل بھی حل کئے ہوتے تو لاکھوں کی تعداد میں عوام عمران خان کے ساتھ نہ نکلتے۔ عبدالعلیم خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چین کے ساتھ سرمایہ کاری کے واویلے کی حقیقت یہ ہے کہ 36ایم او یوز میں سے صرف 2پر کام شروع ہوا اور 59ارب روپے کے نندی پور کی طرح کے کاغذی منصوبے لوڈشیڈنگ سمیت اہم مسائل کم نہیں کرسکے ۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب کے تمام شہروں میں 90فیصد عوام کو پینے کا گندہ پانی میسر ہے جبکہ حکمران بنی ہوئی سڑکوں کو توڑ کر دوبارہ ٹھیکے دینے میں مصروف ہیں انہوں نے 2ارب روپے کی لاگت کے گلبرگ انڈر پاس کے منصوبے کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے عوامی مفاد کے برعکس قرار دیا۔ ایک سوال پر عبدالعلیم خان نے کہا کہ دھاندلی کے خلاف پی ٹی آئی کا بہادرانہ موقف سچ ثابت ہوچکاہے لاہور میں این اے 122اور 125کے علاوہ این اے 118اور 128کے نتائج بھی جلد آنے والے ہیں جو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی کردینگے انہوں نے کہا کہ نواز لیگ عمران خان کے مقابلے میں آدھامینار پاکستان ہی بھرکے دکھادے ،یہ حقیقت ہے کہ اسے عوامی تائیدو حمایت حاصل نہیں ہے۔ عبدالعلیم خان نے کہا کہ ہم ثبوتوں کے ساتھ جوڈیشل کمشن گئے ہیں اور انشاء اللہ مستقبل کیلئے صاف اور شفاف انتخابات کا انعقاد بھی تحریک انصاف کا کریڈٹ ہوگا۔ عبدالعلیم خان نے کہا کہ ہمیں سپریم کورٹ کے ججز پر بھرپور اعتماد ہے اور اگر فیصلہ حکومت کے حق میں آیا تو نواز لیگ کو پورا موقع ملنا چاہیے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...