پنجاب اسمبلی ‘ سانحہ نلتر اور صفورہ چورنگی پر قرار دادیں متفقہ طور پر منظور ‘ شہداء کیلئے دعائے مغفرت

پنجاب اسمبلی ‘ سانحہ نلتر اور صفورہ چورنگی پر قرار دادیں متفقہ طور پر منظور ...

 لاہور (نمائندہ خصوصی) پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں سانحہ ’’نلتراور سانحہ کراچی صفورہ چورنگی‘‘ پر قراردادیں ایوان میں پیش دونوں متفقہ طور پر منظور ، سانحہ نلتر پر قرار داد صوبائی وزیر قانون میاں مجتبیٰ شجاع الرحمن جبکہ صفورہ چورنگی کراچی سانحہ پر مذمتی قرارداد اپوزیشن لیڈر میاں محمد الرشید نے پیش کیا۔صوبائی وزیر قانون کی طرف سے’’سانحہ نلتر‘‘پر پیش کی جانے والی قرارداد میں کہا گیا کہ یہ سانھۃ ایک قومی سانحہ ہے جس پر جتنا بھی افسوس کا اظہار کیا جائے کم پوری قوم اس سانحہ میں شہید ہونے والوں کے لواحقین کے غم میں برابر کی شریک ہے، اپوزیشن لیڈر کی طرف سے پیش کردہ سانحہ کراچہ پر مذمتی قرارداد میں یہ دہشد گردوں کی شدید الفاظ میں نمذمت کی گئی اور حکومت اور پاک فوج کی طرف سے ان دہشت گردوں کے خلاف جاری اپریشن کی حمایت کی گئی اور یہ بھی کہا گیا کہ اس سانحہ میں جو بھی شہید ہوئے ہیں ان کے لواحقین کے غم میں نہ صرف پنجاب بلکہ پورا پاکستان برابر کا شریک ہے اور مطالبہ ہے کہ اس سانحہ میں ملوث دہشت گردوں کو کڑ کر سخت ست سخت سزا دی جائے بعد ازاں دونوں سانحات میں شہید ہونے والوں کے لئے دعا مغفرت بھی کی گئی ۔یہ دونوں قراردادیں متفقہ طور پر منظور کی گئیں۔

لاہور(نمائندہ خصوصی) پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں حکومت نے کہا ہے کہ عطائیوں کے خلاف بہت جلد بل ایوان میں پیش کردیا جائے گا، پیرا میڈیکل سٹا ف کی بھرتی کا آغاز کردیا ہے جلد ہی مزید12سو نرسز بھی بھرتی کر لی جائیں گی، ممبران کو ترقیاتی فنڈز نہ دینے کے خلاف اپوزیشن کا ٹوکن واک آؤٹ،سیاسی کارکنوں کو’’ چمچے‘‘ کہنے کے خلاف پارلیمانی سیکرٹری برائے صحت خواجہ عران نذیر کا احتجاج، پنجاب اسمبلی کا اجلاس گذشتہ روز ایک گھنٹہ20منٹ کی تاخیر سے سپیکر رانا محمد اقبال کی صدارت میں شروع ہوا اجلاس میں محکمہ صحت کے بارے میں ممبران کے سوالوں کے جوابات پارلیمانی سیکرٹری برائے صحت خواجہ عمران نذیر نے دئے۔خواجہ عران نذیر نے ایوان کو بتایا کہ پنجاب حکومت نے ’’ہیلتھ روڈ میپ ‘‘ پر66فیصد کام مکمل کر لیا ہے اور آئندہ دو سے تین ماہ تک تمام بی ایچ یو ز پر ڈاکٹر ز کی تعیناتی مکمل کر لی جائے گی۔رکن اسمبلی اویس قاسم کی سوال کے جواب میں پارلیمانی سیکرٹری نے کہا کہ کچھ نرسز کی بھرتی کر لی گئی ہے اور ان کا نوٹیفکیشن بھی ویب سائٹ پر جاری کردیا گیا ہے انہیں محکمہ کے دفاتر کے چکر لگانے کی ضرورت نہیں ہے انہوں نے مزید کہا کہ پنجاب میں بہت جلد مزید12سو نرسز بھرتی کی جا رہی ہیں جبکہ پیرا میڈیکس کی بھرتی کا عمل شروع ہو چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ بی ایچ یوز میں بھی محکمہ ڈی سی اوز کے ذریعے سے سٹاف کی بھرتی کر رہا ہے۔ڈاکٹر مراد راس کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ عطائیوں کا مسئلہ حکومت یا اپوزیشن کی ہی نہیں بلکہ یہ پورے پاکستان کا مشترکہ مسئلہ ہے اس حوالے سے حکومت ایک بل ایوان میں پیش کرنے جا رہی ہے تاہم اس بل پر تمام اسٹیک ہولڈرز سے مشاورت جاری ہے اور حکومت اس بل پر اپوزیشن کی تجاویز کو بھی شامل کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے سیکڑوں عطائیوں کو گرفتار کیا لیکن قانون میں سقم ہونے کی وجہ سے وہ چھوٹ جاتے ہیں۔

مزید : صفحہ اول


loading...