سبحان اللہ،امریکی سکول کی مسلم طالبہ نے حجاب پہننے کی ایسی وجہ بیان کی کہ تنقید کرنے والوں کے منہ بند ہو گئے

سبحان اللہ،امریکی سکول کی مسلم طالبہ نے حجاب پہننے کی ایسی وجہ بیان کی کہ ...
سبحان اللہ،امریکی سکول کی مسلم طالبہ نے حجاب پہننے کی ایسی وجہ بیان کی کہ تنقید کرنے والوں کے منہ بند ہو گئے

  


نیویارک (نیوز ڈیسک) مغربی معاشرے میں حجاب پر تنقید کرنے والوں کی کمی نہیں اور اکثر یہ سوال اٹھایا جاتا ہے کہ حجاب کا حیاءاور اخلاقیات سے کیا تعلق ہے۔ امریکا کہ ایک نوعمر مسلمان طالبہ نے اپنے ہائی سکول کے اختتام پر جاری کی گئی طلبا کی سالانہ کتاب میں اپنی حجاب والی تصویر شائع کی اور ساتھ حجاب پہننے کی ایسی دلچسپ وجہ بیان کی کہ امریکی اس کی ذہانت اور منطق کے گرویدہ ہوگئے۔

مزیدپڑھیں:دبئی کے شاپنگ مال میں عرب خاتو ن مصر اداکارہ پر ٹوٹ پڑی،وجہ کیا بنی ؟جانئے

ریاست کیلیفورنیا کے شہر فونٹانا کے سمٹ ہائی سکول کی 17 سالہ طالبہ رافقہ علامی نے دیگر طلبا وطالبات کی طرح اپنی سالانہ تصویر کے ساتھ کوئی فلمی ڈائیلاگ یا کسی گانے کا بول لکھنے کی بجائے حجاب کے بارے میں ایک جملہ لکھا۔ اس نے اپنی حجاب والی تصویر کے نیچھے لکھا، ”میں حجاب صرف اس لئے پہنتی ہوں کہ تم لڑکیوں کو بھی موقع مل سکے۔“ طالبہ نے اپنے جملے کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ وہ اس قدر دلکش ہیں کہ اگر حجاب نہ پہنیں تو مردوں کی توجہ انہیں کی جانب رہے لہٰذا وہ حجاب پہنتی ہیں کیونکہ یہ ان کی خوبصورتی کو پردے میں رکھتا ہے اور یوں توجہ ان کی ساتھی لڑکیوں کی طرف رہتی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ بات ازراہ تفنن کہی گئی لیکن اس میں یہ پیغام بھی پوشیدہ ہے کہ حجاب خواتین کی دلکشی کو حیاءکے پردے میں رکھتا ہے اور انہیں مردوں کی غیر ضروری توجہ سے محفوظ رکھتا ہے۔

رافقہ نے جریدے ”ہفنگٹن پوسٹ“ سے باتے کرتے ہوئے بتایا کہ حجاب کے بارے میں مسلمان خواتین کے موقف پر اکثر منفی ردعمل آتا ہے لیکن انہوں نے اپنی بات جس ہلکے پھلکے انداز میں کہی اسے بہت زیادہ پسند کیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ نوجوان امریکی طلبا و طالبات نے ان کے جملے کو حد سے زیادہ پسند کیا اور اکثر نے اس کی گہرائی اور معانی پر بھی غور کیا۔ اکثر لوگوں نے حجاب کے بارے میں کہے گئے ان کے جملے کو خوبصورت ترین بات قرار دیا۔ رافقہ کا مزید کہنا تھا کہ انہیں اس بات سے بہت خوشی ہوئی کہ لڑکیوں کی ایک بڑی تعداد نے کہا کہ انہیں حجاب کے بارے میں یہ بات سن کر اعتماد ملا اور حجاب کے بارے میں ان کا تصور تبدیل ہوگیا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...