چین کی مصنوعی سیارہ گاؤفین5سے ڈیٹا کی وصولی کی تصدیق

چین کی مصنوعی سیارہ گاؤفین5سے ڈیٹا کی وصولی کی تصدیق

بیجنگ(آئی این پی/شِنہوا)چین کی سائنسی اکادمی نے تصدیق کی ہے کہ اس کے ایک ادارے کو حال ہی میں چھوڑے جانے والے مصنوعی سیارے گاؤفین ۔5سے اعدادوشمار کامیابی سے موصول ہونا شروع ہو گئے ہیں ۔سی اے ایس کے ادارہ ریموٹ سینسرنگ اور ڈیجیٹل ارتھ نے کہا کہ کے ریموٹ سینسرنگ سٹلائٹ گراؤنڈ سٹیشن سے ریسرچروں کو 13مئی کو بیجنگ کے نواح میں مائی یون مقام سے گاؤفین ۔5کا ڈیٹا موصول ہوا ہے ،ڈیٹا کا سائز 60جی بی اور ٹائم فریم 9منٹ اور 32سیکنڈ ہے ۔

گاؤفین۔5مصنوعی سیارہ شمالی شان شی صوبے کے ٹائی یوآن سٹلائٹ لانچ مرکز سے 9مئی کو بیجنگ کے مقامی وقت کے مطابق علی اصبح 2:28پر لونگ مارچ 4سی راکٹ کے ذریعے مدار میں بھیجا گیا تھا،یہ سیارہ جامع ماحولیاتی مانیٹرنگ کیلئے استعمال کیا جائیگا۔

یہ سیارہ آلودگی پھیلانے والے زہریلی گیسوں اور ائیروسوزل کے ذریعے چین کے فضائی آلودگی کی صورتحال منعکس کریگا۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...