خیبرپختونخوا حکومت کا تاریخی اقدام ،سرکاری تعلیمی ادارے انگلش میڈیم میں تبدیل

خیبرپختونخوا حکومت کا تاریخی اقدام ،سرکاری تعلیمی ادارے انگلش میڈیم میں ...

چارسدہ (بیورو رپورٹ) خیبر پختونخوا حکومت کا تاریخی اقدام ۔ تمام سرکاری تعلیمی ادارے انگلش میڈیم میں تبدیل کر دئیے گئے ۔ سرکاری تعلیمی اداروں میں انگریزی نصاب کاتدریسی عمل بھی شروع کر دیا گیا ۔ نجی تعلیمی اداروں کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی۔ انگریزی نصاب کے اجراء سے سرکاری اور نجی تعلیمی اداروں میں مقابلے کا رحجان پیدا ہو گا۔ سکول ٹیچر مس تجلی ۔ تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخوا حکومت کی طرف سے تمام سرکاری تعلیمی اداروں کو انگلش میڈیم میں تبدیل کرنے اور انگریزی نصاب کے اجراء کے حوالے سے چارسدہ جرنلسٹس نے چارسدہ کے سب سے قدیم تعلیمی ادارے گورنمنٹ گرلز ہائی سکول چارسدہ حاص کا دورہ کیا ۔ اس موقع پر طالبات اور تدریسی عملہ نے نصاب تعلیم کو انگریزی زبان میں تبدیل کرنے کو خوش آئندقرار دیا ۔ طالبات کا کہنا تھا کہ ہائی سکولوں کی سطح پر کورس انگریزی زبان میں ہونے سے ان کے کیئریر پر یقیناًمثبت اثرات مرتب کریگی اور وہ پر امید ہیں کہ اب سرکاری سکولوں کے غریب طلبہ و طالبات بھی معیاری تعلیم حاصل کر سکیں گے جبکہ پرائیوٹ اور سرکاری تعلیمی اداروں میں پڑھنے والے طلباء میں مقابلے کا رحجان بھی پیدا ہو گا۔ طالبات کا مزید کہنا تھا کہ کورس انگریزی زبان میں پڑھنے سے طلباء و طالبات کو جدید علوم حاصل کرنے میں آسانی ہو گی کیونکہ انگریزی بین الاقوامی زبان ہے اور جدید علوم سے آراستہ ہونے کیلئے انگریزی زبان کی سمجھ بوجھ وقت کی ضرورت ہے ۔ دوسری طرف مذکورہ سکول کی ٹیچر مس تجلی اور دیگر نے صوبائی حکومت کے اقدام کو سراہا مگر انہوں نے اس حوالے سے بتایا کہ سر دست ہائی کلاسسز کیلئے انگریز ی طرز تعلیم اور کورس متعین کیا گیا اگر یہ سلسلہ پرائمری لیول سے شروع کیا جائے اس کے دوررس نتائج برآمد ہونگے ۔ اس حوالے سے غیر جانبددار حلقوں کا کہنا ہے کہ سرکاری سکولوں کا کورس انگریزی زبان میں ہونے سے اساتذہ کے مشکلات میں بھی اضافہ ہوا ہے اور ان کا کہنا ہے ک حکومت کو چاہئے کہ کورس پر عبور حاصل کرنے کیلئے اساتذہ کیلئے تربیتی ورکشاپس کا انعقاد کریں کیونکہ زیادہ تر اساتذہ انگریزی زبان کے ساتھ وابستہ نہیں رہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر