‎فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے زیر اہتمام کراچی میں کانفرنس کا انعقاد

‎فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے زیر اہتمام کراچی میں کانفرنس کا انعقاد
‎فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے زیر اہتمام کراچی میں کانفرنس کا انعقاد

  

‎کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن ) فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے زیر اہتمام کراچی کے مقامی ہوٹل میں فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے لئے کانفرنس بعنوان فلسطین کے لئے سب ساتھ ساتھ کا انعقاد کیا گیا۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئےمہمان خصوصی  سینیٹر رضا ربانی کا کہنا تھا کہ فلسطین میں آج امریکی سفارتخانہ کی منتقلی کے خلاف ہونے والے پر امن  احتجاج پر اسرائیلی افواج کی فائرنگ کے نتیجہ میں اب تک چالیس مظلوم فلسطینیوں کی شہادت کی پرزور مذمت کرتے ہیں۔ 70 سال پہلے فلسطین کی سرزمین پر صہیونی طاقتوں نے اپنا قبضہ جمایا۔صہیونیوں نے فلسطین میں ظلم و بربریت کی وہ داستان رقم کی جس کی مثال تاریخ میں نہیں ملتی۔انہوں نے کہا کہ موجودہ بین الا قوامی صورتحال میں فلسطین کی آزادی ممکن نہیں۔ امت مسلمہ نے فلسطینی مظلوموں کیلئے موثر آواز نہیں اٹھائی اور نہ اسرائیل کے حوالے سے مسلم ممالک نے موثر آواز اُٹھائی۔  اُن کا کہنا تھا کہ فلسطین اور کشمیر میں انسانیت سوز مظالم ہو رہے ہیں۔پاکستان اور فلسطین میں سامراجی قوتیں مسئلہ فلسطین و کشمیر کے حل میں بڑی رکاوٹ ہیں۔

 کانفرنس سے خطاب میں متحدہ قومی موومنٹ کی سینٹرڈاکٹر نگہت مرزا کا کہنا تھا کہ شام،عراق،برما،فلسطین اور کشمیر میں ہونے والے مظالم کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔غزہ میں ہونے والے انسانیت سوز مظالم پر امت مسلمہ کی خاموشی مجرمانہ ہیں۔سیاسی و مذہبی جماعتوں کو چاہئے کہ وہ مملکت خدادا پاکستان میں دہشتگردی انتہا پسندی کی روک تھام کیلئے اپنا فعل کردار ادا کریں۔  سابق سینٹر علامہ عباس کمیلی کا کہنا تھا کہ مسئلہ فلسطین کسی ایک فرقہ کا مسئلہ نہیں بلکہ عالم اسلام کا مسئلہ ہے گزشتہ دور میں لوگ فلسطین کا نام لینے سے گھبراتے تھے مگر آج ایسا نہیں ہے ،دنیا کے حالات تبدیل ہورہے ہیں انشاء اللہ فلسطین جلد آزاد ہوجائے گا۔کانفرنس سے خطاب میں سابق وفاقی وزیر حاجی حنیف طیب نے کہا کہ مظلوم فلسطینیوں کے حق میں آواز اٹھاناہماری اولین ذمہ داری ہے اسلام دشمن قوتیں مسلمانوں کے خلاف محاذبنا رہی ہیں۔ مقبوضہ بیت المقدس میں امریکی سفارتخانہ عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔  جمیعت علما اسلام کے رہنما قاری عثمان کا کہنا تھا کہ70 سال سے مسئلہ فلسطین کے حل کیلئے مسلم حکمران خواب غفلت کا شکار ہیں۔مسلم حکمرانوں کا غاصب اسرائیلی حکمرانوں سے ہاتھ ملانا قابل مذمت ہے،شام،عراق،فلسطین اور کشمیر میں ہونے والی دہشتگردی کی پرزور مذمت کرتے ہیں۔  پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اسرار عباسی نے خطاب میں کہا   کہ تمام امت مسلمہ کو چاہئے کہ وہ یکجا ہو کر فلسطین کی آزادی کیلئے آواز بلند کریں ۔کانفرنس سے خطاب میں اے این پی کے رہنما یونس بونیری کا کہنا تھا کہ بیت المقدس عالم انسانیت کا مسئلہ ہے فلسطین میں انسانیت سسک رہی ہے اسرائیل کی جانب سے مسلسل انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہورہی ہے اور اقوام متحدہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔کانفرنس سے مجلس وحدت مسلمین کے رہنما علامہ احمد اقبال رضوی ،سابق ڈپٹی میئر کراچی طارق حسن نے بھی خطاب کیا ، فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان کے سیکرٹری جنرل صابر ابو مریم نے قرار داد پیش کی کہ ماہ رمضان المبارک کے آخری جمعہ کو یوم القدس کے طور پر سرکاری سطح پر منانے کا اعلان کیا جائے۔ 

‎کانفرنس کے اختتام پر فلسطین فاونڈیشن کی سرپرست کمیٹی کے رکن مظفر ہاشمی نے تمام مہمانان گرامی کا شکریہ ادا کیا۔کانفرنس میں کراچی بار ایسوسی ایشن کے صدر حیدر امام رضوی،ڈاکٹر عالیہ امام،مطلوب اعوان،علامہ باقر زیدی ، محمد حسین محنتی،ڈاکٹر طلعت وزارت،ایم پی اے محفوظ یار خان ،ایم پی اے قمر عباس،شبر رضا،مسلم پرویز،راو ناصر علی،محمد عباس ،قاضی زاہد حسین،ارم بٹ،کرامت علی،فرزانہ برنی،عبد المجید عبدانی،آغا شیرازی، زین العابدین،سائمن گل، اشوک کمار، شکیل خان، عمران خالق، عابدہ بشیر، علی قاسم، عدنان کوڈیا، خواجہ بلال، سید عبد الرزاق، سسمیت دیگر سیاسی و مذہبی جماعتوں اور سول سوسائٹی کے رہنماوں نے بھی خطاب کا۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی